fbpx

اقلیتوں کے حقوق کا تحفظ ہر صورت یقینی بنایا جا رہا ہے

رحیم یارخان : ڈی ایس پی آرگنائزڈ کرائم جاوید اختر جتوئی نے کہا کہ آئین پاکستان کے مطابق اقلیتوں کے حقوق کا تحفظ ہر صورت یقینی بنایا جا رہا ہے۔ قومی ترقی میں اقلیتوں کا کردار عیاں ہے ہندو برادری کے مسائل حل کر دئیے گئے ہیں۔ ہندو برادری کی جانب سے ہیڈ کنسٹیبل ممتازکی شہادت پر ایک منٹ کی خاموشی اور گہرے رنج و غم کا اظہار۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی پی او آفس کے میٹنگ حال میں منعقدہ میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ کچھ عرصہ قبل ہندو برادری کو کچھ شکایات تھیں جن کو ڈی پی او عمر سلامت پوری سنجیدگی سے سنا اور انہیں سچ پاتے ہوئے پی ایس او عبدالہادی کو ہندو برادری کا کل پرسن مقرر کیا کہ 24 گھنٹے وہ ان کے ساتھ رابطے میں رہیں اور ان کی شکایات کے ازالے میں کوئی کسر اٹھا نہ رکھیں جس پر ضلع پولیس نے بھر پور کام کیا اور ہندو برادری کی شکایات کا ازلہ کر دیا۔ اس وقت بھی پولیس اقلیتی برادریوں کو آئینی تحفظ کے لیے پر عزم ہے کیونکہ ہم بحثیت پاکستانی ایک قوم ہیں اور ملک عزیز سب کے لیے ماں کی حثیت رکھتا ہے اور ماں کے کی نظر میں ساری اولاد کی ایک جیسی حثیت ہوتی ہے۔ انہوں نے اس موقع پر کہا کہ ہندو برادری سمیت تمام اقلیتوں نے ملکی ترقی میں اپنا اپنا کردار ادا کیا ہے جو روز روشن کی طرح عیاں ہے، ہندو برادری کے وفد کی رہنمائی کرتے ہوئے بھیا رام انجم نے محکمہ پولیس کا شکریہ ادا کیا جس کی وجہ سے ان کے پولیس سے متعلقہ مسائل حل ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم بھی اسی معاشرے کا حصہ ہیں اس لیے نت نئے مسائل سامنے آتے رہتے ہیں لیکن اب ان کے مقامی سطح پر حل ہونے کی ریشو 99پرسنٹ ہے لیکن اگر کوئی مسئلہ گھمبیر ہو تو پی ایس او عبدالہادی ان کی فوری رہنمائی کرتے ہیں جس پر وہ اظہار اطمنان کرتے ہیں۔ ہندو برادری کے وفد نے ہیڈ کانسٹیبل ممتاز بلا کی شہادت پر اپنے گہرے رنج وغم کا اظہار کیا اور کہا کہ وہ رب ذوالجلال سے دعا گو ہیں کہ شہید کے درجات بلند کرے اس موقع پر انہوں نے سوگ کی علامت کے طور پر ایک منٹ کی خاموشی بھی اختیار کی جس پر ڈی ایس پی جاوید اختر جتوئی نے ہندو برادری کے اس جذبہ کو سراہتے ہوئے ان کا شکریہ ادا کیا۔ میٹنگ میں آئندہ روابط کو قائم رکھنے اور باہمی تعاون کو فروغ دینے کا اعادہ کیا گیا۔ 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close