fbpx

بھارت ریاستی جبر و تشدد کے ذریعے زیادہ دیر تک کشمیریوں کو ان کے بنیادی حق سے محروم نہیں رکھ سکتا،ڈی سی

ڈپٹی کمشنر جمیل احمد جمیل نے کہا ہے کہ بھارت ریاستی جبر و تشدد کے ذریعے زیادہ دیر تک کشمیریوں کو ان کے بنیادی حق سے محروم نہیں رکھ سکتا، کشمیری عوام اپنے حق کے لئے مصائب و آلام برداشت کرتے ہوئے کئی دہائیوں سے لازوال قربانیاں دے رہے ہیں حق خود ارادیت کے لئے کشمیری عوام کی دلیرانہ جدوجہد کی مثال نہیں ملتی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوم کشمیر کے موقع پر ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کے زیر اہتمام گورنمنٹ گرلز ماڈل ہائی سکول(عید گاہ) میں منعقدہ یوم یکجہتی کشمیرسیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں سی ای ا وایجوکیشن اتھارٹی ملک مختار حسین، ڈی او میاں عزیز قریشی، ڈی او شہناز چوہدری، پرنسپل طیبہ انصر، راشدہ کامل سمیت اساتذہ اور طلباء و طالبات کی کثیر تعداد موجود تھی۔ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ حق خود ارادیت کشمیریوں کا وہ حق ہے جسے اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل کے فورم پر تسلیم کیا جا چکا ہے اور جس کے لئے آزادی و حریت کے جذبہ سے اہل کشمیر نے لازوال قربانیاں دی ہیں انشاء اللہ بہت جلد آزادی کی صبح طلوع ہو گی، اہل پاکستان ایک بار پھر کشمیری بھائیوں کے حق خود ارادیت کی بھر پور حمایت کا اعلان کرتے ہوئے اظہار یکجہتی کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کی شہادت کا جذبہ عالمی طاقتوں کو بے حسی کی نیند سے جگانے میں اہم کردار ادا کرے گا۔انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کو حق خود ارادیت دلانے کے لئے ہمیں اندرونی و بیرونی سطح پر مضبوط ہونا پڑے گا ہمارے طالبعلموں کو چاہیے کہ وہ علمی محاذ پر کامیابی سمیٹتے ہوئے پاکستان کو مضبوط ملک بنائیں ۔سیمینار سے سی ای او ایجوکیشن اتھارٹی ملک مختار حسین، راشدہ کامل ودیگر نے بھی خطاب کیا جبکہ گورنمنٹ گرلز ماڈل ہائی سکول، گورنمنٹ بوائز کالونی ہائی سکول، گورنمنٹ انگلش گرلز ہائی سکول سمیت دیگر تعلیمی اداروں کے طلباء و طالبات نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے ملی نغمے اور تقریروں میں اپنے جذبات کا اظہار کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »