رحیم یارخان کی مساجد میں سیکورٹی ہائی الرٹ

رحیم یارخان  ڈی پی او اور ڈٖی سی نماز تراویح شہر کی مختلف مساجد میں ادا کرنا معمول سکیورٹی ہائی الرٹ۔ بہترین ڈیوٹی سرانجام دینے پر پولیس اہلکاروں اور رضا کاروں کو انعام دینے کا اعلان۔ ڈی پی او عمر سلامت اور ڈی سی جمیل احمد جمیل نے رمضان المبارک کے آغاز سے معمول بنا رکھا کہ وہ نماز عشاء اور نماز تروایح شہر کی مختلف مساجد میں ادا کرتے ہیں۔ نماز عشاء کسی مسجد ادا کی تو نماز تراویح کی دو دو چار چار رکت مختلف مساجد میں باجماعت پڑتے ہیں اور اچانک مساجد میں پہنچ جاتے ہیں اور جہاں جگہ ملے جماعت میں شامل ہو جاتے ہیں۔ اس طرح وہ ضلع میں رمضان المبارک کے دوران سکیورٹی کا جائزہ بھی لے لیتے ہیں اور عوام کے درمیان نماز ادا کر کے ان کے اندر احساس تحفظ بھی اجاگر کرتے ہیں اور اس طرح پولیس اہلکاروں کو بھی مزید الرٹ رہ کر ڈیوٹی سر انجام دینے کی ترغیب ملتی ہے کیونکہ نہیں معلوم ڈی پی او اور ڈی سی کب کس مسجد میں پہنچ جائیں۔ 

رحیم یارخان ڈی پی او عمر سلامت نے کہا ہے کہ دشمن تاک میں ہوتا ہے جہاں موقع ملے نشانہ داغ دیتا ہے۔ ایلیٹ پولیس فورس دہشت گردی کے خلاف بہترین تربیت یافتہ ہے پیشہ ورانہ امور کی ادائیگی میں کبھی لاپرواہی نہ کریں۔ فورسسز ہر وقت مشکوک افراد اور اشیاء کی متلاشی رہ کر موجودہ حالات میں ذاتی حفاظت اور فرائض سر انجام دے سکتی ہیں۔ ہیلمٹ کے عدم استعمال سے ضلع میں روزانہ چالیس تا پچاس افراد سنگین حادثات کی نظر ہو رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایلیٹ پولیس فورس کے جوانوں سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی فورسسز نے دہشت گردی کے خلاف جنگ بہت سی قربانیوں اور موئثر حکمت عملی سے جیتی ہے مگر ملک میں کبھی کبھار ایسے واقعات رونما ہو جاتے ہیں جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ شر پسند، ملک دشمن اور ناعاقبت اندیش دشمن سانسیں ٹوٹتے ہوئے بھی اپنی مذموم کارروائیوں کو عملی جامہ پہنانے کی کوشش کرتا رہتا ہے اور اس کا خاص ٹارگٹ ملکی اثاثے اور فورسسز ہوتی ہیں اس لیے ضروری ہے کہ ہمہ وقت موقع کی تلاش میں رہنے والے دشمن کی کیوں نہ ہم خود تلاش میں رہیں اور اپنے ارد گرد مشکوک افراد اور اشیاء پر گہری نظر رکھیں۔ انہوں نے کہا کہ ایلیٹ فورس کو دہشت گردی اور ہارڈ کریمنلز کے خلاف خاص تربیت دی گئی ہے اس لیے آپ خود اپنی ایس او پی عمل درآمد یقینی بنا کر ذاتی حفاظت کے ساتھ اپنے فرائض کی ادائیگی کو یقینی بنائیں۔ ڈی پی او عمر سلامت نے کہا کہ تمام اہلکار موٹر سائیکل پر سوار ہوتے ہوئے ہیلمٹ لازمی استعمال کریں اعداد وشمار کے مطابق ضلع میں روزانہ موٹر سائیکل حادثات میں چالیس سے پچاس افراد سنگین حادثات کا شکار ہورہے ہیں اور قیمتی انسانی جانوں کا ضیاء ہورہا ہے۔ ہیلمٹ کو موٹر سائیکل سواری کے ساتھ لازم ملزول رکھیں۔ 

رحیم یارخان موبائل پولیس خدمت مرکزنے تمام تر جدید سہولیات کے ساتھ کام کا آغاز کر دیا۔ ضلع کی تمام تحصیلوں، بڑے قصبوں اور چوک چوراہوں پر سہولت فراہم کی جاء گی۔ موبائل خدمت مرکزچودہ سہولیات سے آراستہ ہے مقصد عوام کو ان کی دہلیز پر سہولیات کی فراہمی یقینی بنانا ہے۔ تفصیل کے مطابق حکومت پنجاب اور انسپکٹر جنرل آف پولیس پنجاب کی جانب سے ایک ہی چھت تلے 12 سہولیات کی فراہمی کے لیے ضلعی ہیڈ کوآرٹرز یعنی ڈی پی او آفسز میں پولیس خدمت مرکز قائم کئے گئے تھے۔ اب اس سہولت کو بڑھاتے ہوئے ان کی تعداد 14 کر دی گئی ہے اور تمام سسٹم ایک بڑی گاڑی میں فٹ کر کے موبائل خدمت مراکز بنا دئیے گئے ہیں جو کہ اب ضلع کے کونے کونے میں جاکر عوام کو ان کی دہلیز پر 12 کی بجائے 14 سہولیات جن میں پولیس کریکٹر سرٹیفکیٹ، جنرل پولیس ویریفیکیشن، کرایہ داری کا اندراج، وہیکل ویری فیکیشن، رپورٹ گمشدگی، گمشدہ بچوں کی رپورٹ، کرائم رپورٹ، خواتین پر تشدد کی رپورٹ، ایف آئی آر کی کاپی، رجسٹریشن آف پرائیویٹ ایمپلائی، لرنر ڈرائیونگ لائسنس کا حصول، ڈرائیونگ لائسنس کی تجدید، انٹرنیشنل ڈرائیونگ لائسنس کا حصول اور موبائل ویری فیکیشن سروس شامل ہیں ابتدائی طور پر موبائل خدمت مرکز تعلیمی داروں میں جاکر خدمات سر انجام دے رہا ہے کیونکہ تعلیمی اداروں سے گھر گھر اس سہولت کی خبر جائے گی اور آئندہ ضلع بھرمیں یہ خدمت عوام الناس کو حاصل ہوگی۔ 
رحیم یارخان  ٹریفک پولیس میں پہلی بار تعینات ہونے والے اہلکاروں کی تربیت شروع۔ اہلکاروں کوٹریفک پولیس کے طریقہ کار پہلے سلام پھر کلام اور اشاروں کی تربیت دی جا رہی ہے۔ سارجنٹ حافظ نورالدین زنگی شاہ بطور چیف انسٹرکٹر تربیت دے رہے ہیں۔ تفصیل کے مطابق ضلع میں ٹریفک پولیس کی ضرورت کو مد نظر رکھتے ہوئے ضلعی پولیس کے متعدد پولیس اہلکاروں کو ٹریفک پولیس میں تعینات کر دیا گیا ہے جن کو ٹریفک پولیس کی پیشہ ورانہ تربیت دینے کے لیے ایک ہفتہ کاکورس ڈی پی او افس میں کروایا جا رہا ہے جس میں انہیں ٹریفک پولیس کے ماٹو پہلے سلام پھر کلام اور ٹریفک وکنٹرول کرنے اور رواں رکھنے کے لیے اشاروں کی تربیت دی جا رہی ہے یہ کورس ڈی پی او عمر سلامت کے حکم، ڈی ایس پی ٹریفک پولیس فیاض احمد پنسوتہ کی ہدایت و نگرانی میں سارجنٹ حافظ نورالدین زنگی شاہ کروا رہے ہیں۔ 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close