fbpx

ڈاکٹرکے گھر کام کرنے والی 50سالہ ملازمہ کی لاش ،ملحقہ خالی کوٹھی سے برآمد

رحیم یارخان ڈاکٹرکے گھر کام کرنے والی 50سالہ ملازمہ کی لاش ،ملحقہ خالی کوٹھی سے برآمد، پولیس نے تحویل مےں لیکر شناخت کیلئے ہسپتال کے سرد خانہ منتقل کردی، 15روزبعد شناخت ہوگئی، ڈاکٹر نے بیوی کے ہمراہ والدہ کو قتل کیا،بیٹا۔پولیس نے پوسٹ مارٹم کرادیا، لاش تدفین کے لئے ورثاءکے حوالے کردی۔ میڈیکل رپورٹ پر کارروائی عمل میں لائی جائے گی، پولیس۔ تفصیل کے مطابق سردار کالونی کی رہائشی 50سالہ آمنہ بی بی جو کہ ڈاکٹر جام ریاض احمد کے گھر بطور ملازمہ تھی، جس کی لاش 9جولائی کو جام ریاض احمد کے گھر سے ملحقہ خالی کوٹھی مےں دیکھ کرملازم نے پولیس کواطلاع فراہم کردی، جس پر پولیس تھانہ سٹی اے ڈویژن مےں تعینات اسسٹنٹ سب انسپکٹر محمد امین باجوہ پولیس نفری کے ہمراہ آفیسر کالونی کے علاقہ مےں موقع پر پہنچ گیا اور آمنہ بی بی کی لاش تحویل میں لیکر شناخت کیلئے شیخ زید ہسپتال سرد خانہ منتقل کردی،15روز بعد آمنہ بی بی کے بیٹے محمدامین اور دیگر قریبی رشتہ داروں منظوراحمد اور عبدالغفار نے ہسپتال پہنچ کر آمنہ بی بی کی شناخت کرلی تھی، ڈاکٹر جام ریاض احمد اور اس کی بیوی عابدہ ریاض نے والدہ آمنہ بی بی کو قتل کیا ہے، بیٹے محمدامین کا الزام، پولیس نے آمنہ بی بی کی لاش کا پوسٹ مارٹم کرادیا اورلاش پوسٹ مارٹم کے بعد تدفین کیلئے ورثاءکے حوالے کردی۔پوسٹ مارٹم میڈیکل رپورٹ آنے پر قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ بیٹے محمدامین نے میڈیا کوبتایا کہ اس کی والدہ آمنہ بی بی گزشتہ تین ماہ سے ڈاکٹر جام ریاض احمد کے گھر مےں بطورملازمہ رہتی تھی، 9جولائی صبح11بجے الزام علیہ ڈاکٹرجام ریاض کے ملازم کو ان کے گھر بھیجا گیا اورکہا کہ آپ کی والدہ گھر پہنچ گئی ہے یا نہیں، اسی روز ڈاکٹر جام ریاض احمد کے گھر سے ملحقہ خالی کوٹھی سے لاوارث خاتون کی لاش برآمد ہوئی، 10جولائی کو ڈاکٹر جام ریاض احمد نے ان سے رابطہ کرتے ہوئے گھر پہنچ گیااورکہا کہ ملنے والی لاش آپ کی والدہ کی نہ ہے بلکہ نامعلوم گداگرخاتون کی ہے۔اوراسے مختلف اوقات مےں کہتا رہا میرے ہمراہ تم تھانے چلو یاسفید کاغذات پر انگوٹھا لگادو تاکہ تمہاری والدہ آمنہ بی بی کی گمشدگی کی تھانہ مےں رپورٹ درج کرائی جائے اور ڈاکٹر جام ریاض احمد اوراس کی بیوی ڈاکٹر عابدہ ریاض انہیں اسکی والدہ کے لاپتہ ہونے مےں ملوث نہ ہونے کی یقین دہانی کراتے رہے۔ اپنی مدد آپ کے تحت قریبی رشتہ داروں سے معلومات شروع کردی، لاعلمی کااظہار ہونے پر شک کی بناءپر ہسپتال کے سرد خانے پہنچ گئے جہاں ملنے والی لاش کی شناخت اپنی والدہ آمنہ بی بی کے نام سے کرلی، بیٹے محمدامین نے شبہ ظاہر کیا کہ ڈاکٹر جام ریاض احمد اور اس کی بیوی ڈاکٹرعابدہ ریاض نے قتل کیاہے اور گناہ چھپانے کی خاطر لاش ملحقہ خالی کوٹھی میں رکھ دی، متعدد بار ڈاکٹر جام ریاض سے رابطہ کرنے کی کوشش کی جس پر متعلقہ ڈاکٹر نے فون اٹینڈ نہیں کیا۔پولیس ذرائع کے مطابق آمنہ بی بی کی لاش کاپوسٹ مارٹم کرادیا ہے اورمزید کارروائی رپورٹ آنے پر عمل میں لائی جائے گی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close