fbpx

ملک میں گندم کے ذخائر تسلی بخش ہیں,وفاقی سیکرٹری برائے نیشنل فوڈ سکیورٹی

رحیم یارخان : پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن کے ایک نمائندہ وفد نےوفاقی وزیر برائے نیشنل فوڈ سکیورٹی اینڈریسرچ سے فخر امام سے ملاقات کی۔

وفد میں سینٹرل چیئرمین عاصم رضا احمد، چیئرمین پنجاب عبدالرو فمختار، اورمحمد طارق صادق ممبر سینٹرل ایگزیکٹو شامل تھے۔

ملاقات کےدوران وفاقی سیکرٹری برائے نیشنل فوڈ سکیورٹی اینڈ ریسرچ بھی موجودتھے،اس ملاقات میں ملک میں گندم اور آٹے کی مجموعی صورت حال پر تفصیلی گفتگو ہوئی اور ملک میں گندم کے ذخائر کو تسلی بخش قرار دیا گیا۔

اور اس امر پر اطمینان کا اظہار کیا گیا کہ فی الحال ملک میں کسی قسم کی غذائی قلت کا اندیشہ نہیں ہے،

وفاقی وزیر نے وفد کو بتایا کہ فوڈ سکیورٹی کومزید مستحکم کرنے کیلئے حکومت نے پانچ لاکھ ٹن گندم برآمد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

برآمدی گندم کے بیشتر سودے طے پا چکے ہیں اور جلد ہی برآمدی گندم کی آمد کا سلسلہ شروع ہوجائے گا۔

پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن کے وفد نےوفاقی وزیر کو بتایا اس وقت ملک بھر میں آٹے کی فراہمی کی صورت حال تسلیبخش ہے۔

ملک میں گندم کے موجودہ ذخائر کو مدِ نظر رکھتے ہوئے مستقبل میں آٹے کی مصنوعات کی قلت کا کوئی اندیشہ نہیں ہے۔

تاہم کسی بھی ممکنہ بحرانسے بچنے کیلئے اور ملکی فوڈ سکیورٹی کو مزید مستحکم کرنے کیلئے پرائیویٹ
سیکٹر کے ساتھ ساتھ پبلک سیکٹر میں بھی گندم برآمد کی جائے۔

پاکستان فلورملز ایسوسی ایشن کی جانب سے مطالبہ کیا گیا حکومت فوری طور پر پبلک سیکٹر
میں دس لاکھ ٹن گندم برآمد کرے،

تاکہ ملک میں گندم کی قیمتوں استحکا مپیدا ہو اور مستقبل میں کسی بھی نا خوشگوار صورت حال سے بچا جاسکے۔حکومتپاکستان نے پرائیویٹ سیکٹر میں پانچ لاکھ ٹن گندم برآمد کرنے کی اجازت دیہے،

اس میں اضافہ کیا جائے اور پرائیویٹ سیکٹر کو دس لاکھ ٹن گندم برآمدکرنے کی اجازت دی جائے، اور گندم کی امپورٹ پرعائد 6فیصد ڈیوٹی اور 2فیصد ایڈیشنل ٹیکس کا فی الفور خاتمہ کیا جائے

حکومت فلور ملز مالکانکودس لاکھ ٹن گندم امپورٹ کرنے اور اس کی مصنوعات کی ری ایکسپورٹ کرنے کی
اجازت دے،

تاکہ ملک عالمی مارکیٹ میں رسائی کے ساتھ ساتھ ملک میں گندم کےکاشکاروں کو گندم کی زیادہ کاشت کی ترغیب ملے اور ملک غذائی خود کفالت کیجانب گامزن ہو وفاقی وزیر نے اس سلسلہ میں مثبت اقدامات کرنے کی یقین
دہانی کروائی جلد فیصلہ متوقع ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close