fbpx

نجی بینک میں دھماکہ،تحقیقاتی ٹیم تشکیل 24گھنٹے میں رپورٹ مرتب کرنے کی ہدایت

blast in sadiqabad jit report
رحیم یار خان :نجی بینک میں دھماکے کا واقع، مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل جو24گھنٹے میں اپنی رپورٹ مرتب کرے گی،تحقیقاتی ٹیم میں بم ڈسپوزل سکوارڈ، سول ڈیفنس، سپیشل برانچ سمیت دیگر سیکورٹی اداروں کے نمائندگان شامل ہیں۔تحصیل صادق آباد قومی شاہراہ کے نزدیک فیصل اسلامی بینک میں دھماکہ کی اطلاع موصول ہوئی جس پر ضلعی انتظامیہ سمیت تمام ریسکیو ادارے حرکت میں آگئے اور ریسکیو1122کی ٹیم نے ایمبولینس اور فائر وہیکل کے ہمراہ جائے حادثہ پر پہنچ کر ریسکیو اینڈ ریلیف اپریشن شروع کر دیا،واقع کی اطلاع ملتے ہیں ڈپٹی کمشنر جمیل احمد جمیل اور ڈی پی او عمر سلامت بھی موقع پر پہنچ گئے اور ریسکیو اینڈ ریلیف سرگرمیوں کی مانیٹرنگ شروع کر دی۔فیصل بینک حادثہ میں 20افراد زخمی ہوئے جس میں سے 14کو تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال صادق آباد جبکہ 6زخمیوں کو شیخ زید ہسپتال رحیم یار خان منتقل کر دیا گیاجبکہ دھماکہ کے باعث قریبی عمارتوں اور گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا۔ڈپٹی کمشنر جمیل احمد جمیل نے تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال صادق آباد اور شیخ زید ہسپتال رحیم یار خان میں ایمرجنسی کا نفاذ کرتے ہوئے تمام سینئر ڈاکٹرز، پیرا میڈیکل سٹاف کو طلب کر لیا اور حادثہ میں زخمی افراد کو بہتری علاج معالجہ کی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایات جاری کیں۔ریجنل پولیس آفیسر بہاولپور عمران محمود نے بھی جائے حادثہ کا دورہ کیا او رریسکیو اینڈ ریلیف سمیت قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا۔ڈی پی او عمر سلامت نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ فیصل بینک میں دھماکہ کی وجوہات کا تعین کیا جا رہا ہے تاہم اس حادثہ میں کسی قسم کے دھماکہ خیز مواد استعمال ہونے کے شواہد نہیں ملے۔بعد ازاں ڈپٹی کمشنر جمیل احمد جمیل نے ڈی پی او عمر سلامت کے ہمراہ ٹی ایچ کیو ہسپتال صادق آباد اور شیخ زید ہسپتال رحیم یار خان میں زیر علاج مریضوں کی عیادت کی اور متعلقہ حکام کو حادثہ میں زخمی ہونے والے افراد کو بہترین طبی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایات جاری کیں

Blast in sadiqabad jit report
Blast in sadiqabad jit report

blast in sadiqabad jit report

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »