دیگر متاثرہ ممالک سے آئے5700سے زائد افراد کی سکریننگ کا عمل مکمل کر لیا گیا

رحیم یار خان :ڈپٹی کمشنر علی شہزا دکی زیر صدارت ضلعی رابطہ کمیٹی برائے انسداد کورونا کا اجلاس منعقد ہوا جس میں کورونا وائرس کی موجودہ صورتحال اور محکمانہ کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے کہا کہ ضلع میں ایران ، سعودیہ سمیت دیگر متاثرہ ممالک سے آئے5700سے زائد افراد کی سکریننگ کا عمل مکمل کر لیا گیا ہے
جبکہ ضلع میں کورونا کے پھیلاﺅ کو روکنے اور بیرون ممالک سے آئے افراد کی سکریننگ کو یقینی بنانے کے لئے27زون تھانہ کی سطح پر متعلقہ تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنرز کی زیر نگرانی بنائے گئے ہیں اور ان 27ٹیموں میں محکمہ صحت کے ڈاکٹرز، پولیس، ریونیو، سپیشل برانچ، سیکورٹی برانچ کے نمائندگان شامل ہیں۔
انہوں نے کہا کہ اب تک ضلع میں 224مشتبہ مریضوں کے ٹیسٹ لئے گئے ہیں جس میں سے95منفی اور18مریضوں کے نتائج مثبت آئے ہیں اور دو کورونا سے متاثرہ مریض جانبحق ہوئے ہیں جبکہ16مریض شیخ زید ہسپتال اور ٹی ایچ کیو صادق آباد کے کورونا آئسولیشن وارڈز میں زیر علاج ہیں۔
ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ضلع میں حفاظتی کٹس وافر مقدار میں دستیاب ہیں اور ڈاکٹرز، پیرامیڈیکس سمیت کورونا کے مشتبہ و کنفرم مریضوں کو علاج کی سہولتیں فراہم کرنے والے سٹاف کی حفاظت ہماری پہلی ترجیح ہے جس پر کوئی سمجھوتا نہیں کیا جائے گا اور وزانہ کی بنیاد پر حفاظتی کٹس کی مانیٹرنگ اور دستیابی کو یقینی بنایا جا رہا ہے۔انہوں نے ہدایت کی کہ کورونا سے متاثرہ مریضوں کے رابطہ میں رہنے والے تمام افراد کو قرنطینہ کرتے ہوئے ان کے ٹیسٹ بھی بھجوا دیئے گئے ہیں تاکہ اس وبائی مرض کے پھیلاﺅ کو روکا جا سکے۔
انہوں نے کہا کہ سندھ پنجاب بارڈرز پر بھی سکریننگ کا عمل شروع کیا گیا ہے اور اب تک3700سے زائد افراد کی سکریننگ کی جا چکی ہے ۔اجلاس میں ہیلتھ سہولیات کا جائزہ لیتے ہوئے ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ شیخ زید ہسپتال کے پی پی بلاک کورونا آئسولیشن ڈکلیئر کیا گیا ہے جس میں27بیڈز کی سہولت موجود ہے جسے مزید بڑھایا جا رہا ہے اور ایک شعبہ کورونا آئسولیشن وارڈز کے لئے مختص کیا گیا ہے
جس سے اس کی استعداد کار150بیڈز تک ہو جائے گی۔انہوں نے کہا کہ ضلع کے قرنطینہ مراکز میں 100سے زائد مشتبہ افراد کو رکھا گیا جنہیں تمام تر سہولیات فراہم کی جا رہی ہے جبکہ ان متاثرین کے گھروں میں راشن بھی فراہم کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ عوام کی حفاظت اورکورونا وائرس کے پھیلاﺅ کو روکنے کے لئے لاک ڈاﺅن کے باعث معاشی مشکلات کے شکار مستحق گھرانوں کو ضلعی انتظامیہ چیمبر آف کامرس اور دیگر مخیر افراد و اداروں کے تعاون سے راشن بیف فراہم کر رہی ہے اور اس سلسلہ میں اسسٹنٹ کمشنرز کی زیر نگرانی کمیٹیاں بنائی گئی ہیں
جس میں تعاون کرنے والے اداروں کے نمائندگان شامل ہیں اور یہ کمیٹیاں پر تحصیل میں مکمل تحقیق کے بعد مستحق گھرانوں کو راشن بیگ فراہم کر رہی ہے اور ضلع میں 7ہزار سے زائد راشن بیگ تقسیم کئے جا چکے ہیں۔ڈپٹی کمشنر نے تمام اداروں کی مجموعی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ادارے حکومتی ہدایات پر اپنے تمام تر وسائل کے ساتھ عوامی تحفظ یقینی بنانے کے لئے متحرک ہے ۔
عوام پر بھی ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ ان حالات کی سنجیدگی کو سمجھتے ہوئے خود اور اپنے عزیز و اقارب کو گھروں تک محدود رکھیں مشترکہ کوششوں سے ہی ہم ان حالات کا مقابلہ اور اس وبا کو شکست دے سکتے ہیں۔اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(ریونیو)ڈاکٹر جہانزیب حسین لابر، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(جنرل)شیخ محمد طاہر، سی ای ا وہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر سخاوت علی رندھاوا سمیت دیگر متعلقہ افسران موجود تھے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close