fbpx

کپاس کی سفید مکھی کا مربوط طریقہ انسداد

کپاس کی سفید مکھی کا مربوط طریقہ انسداد
کپاس کی فصل پر مختلف ضرررساں کیڑے ابتدائی نشونماءسے چنائی کے مرحلہ تک حملہ آور ہوتے ہیں جو پتوں کا رس چوس کر پتوں کو کمزوربنا دیتے ہیں جس کی وجہ سے کپاس کی پیداوار میں نمایاں کمی واقع ہوجاتی ہے سفید مکھی کپاس کے رس چوسنے والے کیڑوں میں ایک انتہائی اہم کیڑا جو کہ کپاس کے ساتھ دیگر فصلات پر بھی حملہ آور ہوتا ہے اور پتہ مروڑ وائرس کی بیماری کوپھیلانے کا موجب ہے پچھلے سال راجن پور سمیت کپاس کی کاشت کے مرکزی علاقوں میں سفید مکھی کا شدید حملہ مشاہدہ میں آیا ۔ سفید مکھی کی پہچان اور مربوط طریقہ انسداد IPMدرج ذیل ہے۔
پہچان :۔  بالغ سفید مکھی کا جسم پیلا پر سفیدسفوف سے ڈھکے ہوتے ہیں ۔قد 1.5سے 2ملی میٹر ہوتا ہے۔
بچے:۔ بچے بیضوی قسم کے ہوتے ہیں جن کا رنگ زرد سے سبزی مائل ہوتا ہے ۔
انڈے:۔ مادہ سفید مکھی ایک ایک کرکے تقریباً 110انڈے پتوں کی نچلی سطح پر دیتی ہے ۔
دوران حیات:۔
تین سے پانچ دن میں بچے انڈوں سے نکل آتے ہیں ۔ بچے8 سے 14دن میں کویا بن جاتے ہیں کویا دو سے8 دن میں بالغ مکھی بن جاتی ہے اور بالغ2 سے 5 دن زندہ رہتی ہے ۔سفید مکھی تقریباً 15 دن میں اپنا دوران زندگی مکمل کرلیتی ہے ۔ اور1 سال میں سفید مکھی کی دس سے بارہ نسلیں مکمل ہوتی ہیں ۔
میزبان پودے:۔
سفید مکھی کے میزبان پودوں کی پانچ سو سے زائد اقسام ہیں جن میں کپاس کے علاوہ سفید مکھی ، سورج مکھی، گوبھی ، مونگ ، ٹماٹر،گھیا، کدو، جڑی بوٹیوں اور باغات کے پودوں پر بھی حملہ کرتی ہے ۔
نقصان کی علامات:۔
  سفید مکھی کا حملہ گرم اور خشک موسم میں زیادہ ہوتا ہے ۔ بالغ اور بچے پتے کی نچلی سطح سے رس چوستے ہیں اور ایک لیس مادہ خارج کرتے ہیں جس پر پھپھوندی لگنے سے پتے سیاہ ہوجاتے ہیں ۔اسطرح پودوں میں خوراک بنانے کا عمل متاثر ہوتا ہے۔پوداکمزور ہوجاتا ہے اور پتے مرجھاکر سوکھ جاتے ہیں۔
نقصان کی معاشی حد:۔ 5 بالغ یا5 بچے یا دونوں ملا کر5فی پتہ
مربوط طریقہ انسداد:۔ (IPM)
کاشتکار سفید مکھی کے انسداد کے لیے درج ذیل سفارشات پر عمل کریں۔
*سفید مکھی کے متبادل میزبان پودوں کو کپاس کے کھیتوں کے پاس کاشت نہ کریں۔
*جڑی بوٹیوں کو بروقت تلف کریں ۔
*معاشی نقصان دہ حد پرہی سفید مکھی کو کنٹرول کریں اور کسی طور اس کو حد سے نہ بڑھنے دیں
*بالغ اور بچے فصل پر موجود ہوں تو سپرے کے لیے ایسی سپرے کا انتخاب کریں جو ان دونوں کے خلاف موثر ہوں۔
*پیلے چپکنے والے پھندے(Sticky Traps) استعمال کریں
*فصل کا باقاعدگی سے معائنہ کریں
*فصل کو پانی کی کمی نہ آنے دیں۔
سفید مکھی کے موثر کنٹرول کے لیے مقامی زرعی ماہرین کے مشورے سے درج ذیل زہروں کوا ستعمال کریں:۔
بالغ مکھی کے لیے:۔ اسیٹامپرڈ 125تا150گرام ملی لیٹر فی ایکڑ
تھائیو میتھاکسم+ایبا میکٹن 400ملی لیٹر فی ایکڑ
کلوٹھیا نیڈن 150تا200ملی لیٹر فی ایکڑ
تھائیو سائیکلیم ہائیدڈروجن آگزی لیٹ+اسیٹامپرڈ 200گرام فی ایکڑجب فصل بڑی
ہوچکی ہو
 میٹرین 500ملی لیٹر فی ایکڑ
سفید مکھی کے بچوں کے لیے:۔
بپروفیزن 600گرام فی ایکڑ
پائری پراکسی فن 400ملی لیٹر فی ایکڑ
سپائروٹیٹرامیٹ 125ملی لیٹر فی ایکڑ
فلونیکا مڈ 80گرام فی ایکڑ
ڈی نوٹی فیوران +سپائروٹیٹرامیٹ 250ملی لیٹر فی ایکڑ
ڈایا فیتھیوران 200ملی لیٹر فی ایکڑ
نوٹ!
بہتر نتائج کے لیے 4یا 5دن کے وقفے سے دوبارہ سپرے کریں خاص طور پر جب فصل کالی ہو رہی ہو یا سفید مکھی کے بچوں کا حملہ زیادہ ہو۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »