115 ملین پاکستانیوں کا موبائل ڈیٹا، ٹیکس تفصیلات ڈارک ویب(Dark Web) پر برائے فروخت

115 ملین پاکستانیوں کا موبائل ڈیٹا، ٹیکس تفصیلات ڈارک ویب(Dark Web) پر برائے فروخت

رحیم یارخان (وئب ڈیسک )پاکستان کی انفارمیشن سیکیورٹی کمپنی Rewterz نے دعویٰ کیا ہے کہ اس نے 115 ملین پاکستانیوں کے ڈیٹا کی فروخت کے لیے اشتہار کا سراغ لگا لیا ہے۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ ڈیٹا کی فروخت کے لیے ڈارک ویب پر اشتہار دیکھا گیا ہے جس میں اس کی قیمت 300 بٹ کوائین یا 1.2 ملین امریکی ڈالر لگائی گئی ہے۔

کمپنی کے مطابق ڈیٹا کے اشتہار سے معلوم ہوتا ہے کہ پاکستان میں ایسے عناصر موجود ہیں جو سائبر حملوں کے ذریعے مختلف کمپنیوں کو شکار بناتے ہیں۔

مذکورہ کمپنی کی تھریٹ انٹیلیجنس ٹیم نے اشتہار میں شامل ڈیٹا کے سیمپل  کا تجزیہ کیا تو یہ بات سامنے آئی کہ اس میں موبائل صارفین کی انتہائی ذاتی معلومات جن میں مکمل نام، شناختی کارڈ نمبر اور یہاں تک کہ ٹیکس نمبر بھی شامل ہیں۔

اشتہار لگانے والا شخص ڈارک ویب (Dark Web)فورم کا وی آئی پی ممبر ہے، اشتہار میں لکھا گیا ہے کہ ڈیٹا اسی ہفتے چوری کیا گیا اور اسے مسلسل اپ ڈیٹ کیا جا رہا تھا۔

کمپنی کے ماہرین کا خیال ہے کہ اس سطح کی خلاف ورزی سے ٹیلی کام کمپنیوں کی سیکیورٹی اور پرائیویسی کے حوالے سے بہت سے سوالات جنم لیتے ہیں۔

ان کا خیال ہے کہ اگرچہ حتمی طور پر کچھ کہنا قبل از وقت ہے لیکن بظاہر یہ ڈیٹا ایک یا کئی بار سائبر خلاف ورزیوں کے ذریعے چوری کیا گیا ہے۔

ابھی تک یہ بات سامنے نہیں آئی کہ پاکستان کی ایک کمپنی سائبر حملے کا شکار ہوئی ہے یا تمام کمپنیوں کا ڈیٹا چوری ہوا ہے۔

اگر ڈیٹا چوری ہوا ہے تو یہ بات صارفین کے علم میں لانی چاہیے اگرچہ اس بات کو بھی رد نہیں کیا جا سکتا کہ ٹیلی کام کمپنیوں کو ابھی تک اس کا علم ہی نہ ہوا ہو۔

صارفین کے لیے انتہائی پریشان کن بات ہے کہ ان کی ذاتی معلومات افشا ہو جائیں۔

(Dark Web)

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »