ہاﺅسنگ سوسائٹی,2 سکول اورمیرج ہال کی منظوری دی گئی

رحیم یار خان ڈپٹی کمشنر/ایڈ منسٹریٹر میونسپل کارپوریشن علی شہزاد کی سربراہی میں ڈسٹرکٹ پلاننگ اینڈ ڈیزائن کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا جس میں تمام میونسپل کمیٹیز، تحصیل کونسل کے چیف افسران، ایکسین بلڈنگ، نمائندہ ٹریفک پولیس، ہائی ویز ویگر نے شرکت کی,
سیکرٹری پلاننگ اینڈ ڈیزائن کمیٹی ایم او پلاننگ حسین لیاقت نے منظوری کے لئے آئے کیسز بار ے ڈپٹی کمشنر کو بریفنگ دی۔ اجلاس میں 2 سکولوں، ایک میرج ہال اور ایک ہاﺅسنگ سوسائیٹیز کی منظوری دی گئی، ایک کالج اور میرج ہال کے کیس مسترد اور باقی کیسز کو دوبارہ پیش کرنے کی ہدایات دی گئیں۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے کہا کہ شہر کو خوبصورت بنانا ڈیزائن اینڈ پلاننگ کمیٹی کی ذمہ داری ہے،
ایسی کسی عمارت کا نقشہ منظور نہیں ہونا چاہیے جس میں قواعد و ضوابط کو نظر اندازاور حکومتی فیسوں کی ادائیگی نہ کی گئی ہو جبکہ نقشہ کی منظوری کے بغیر تعمیرات کا آغاز کرنیوالے تما م کاروباری اداروں کے خلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔
اجلاس میں33کیسز کا جائزہ لیا گیا جس میں ہاﺅسنگ سوسائٹیز، پیٹرول پمپس، سکول، ہسپتال و دیگر کمرشل عمارتیں شامل تھیں ڈپٹی کمشنر نے متعد د ہاﺅسنگ سوسائٹیز،پیٹرول پمپس کے کیسز کی منظوری بلڈنگ بائی لاز و دیگر ضرور ی شرائط سمیت قانونی و تعمیراتی تقاضے پورے نہ کرنے پر موخر کردیا۔ڈپٹی کمشنر نے ایم او پلاننگ کو ہدایت کی کہ آئندہ اجلاس میں نقشہ کی منظوری کے لئے آنے والے ہر کیس کا ون پیج بریف تیار کیا جائے جس میں تمام تفصیلات درج ہوں جو کی تمام تر ذمہ داری ایم او پلاننگ پر عائد ہو گی۔
انہوں نے کہا کہ ایسا کوئی بھی کیس کمیٹی میں شامل نہ کیا جائے جو قواعد و ضوابط پر پورا نہ اترتا ہو ۔انہوں نے ہدایت کی کہ منظور ی کے حامل تمام کیسز طے شدہ قواعد و ضوابط پر مکمل آنے چاہیے جبکہ کاروباری عمارتوں میں پارکنگ سے متعلقہ شرائط کو از سر نو تشکیل دیتے ہوئے موجودہ حالات کے مطابق پارکنگ ایریاز میں اضافہ کیا جائے ،مطلوبہ تقاضوں و شرائط کے مطابق گاڑیوں کی پارکنگ کے بندوبست کے بغیر کوئی نقشہ منظور نہیں کیا جائے گا۔
رحیم یار خان ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے عباسیہ فلائی اوور کا معائنہ کیا، فلائی اوور پر آمدورفت کو بہتر بنانے اور ٹریفک بہاﺅ کے تسلسل کو برقرار رکھنے کے لئے محکمہ ہائی ویز کے پلاننگ ایڈ ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ کی خدمات حاصل کی جائیں گی، ایس ای ہائی ویز طارق ملغانی کی بریفنگ۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے عباسیہ فلائی اوور کے فنکشنل ہونے کے باعث اندرون شہر شاہی روڈ پر بڑھتے ہوئے ٹریفک کے دباﺅ سمیت دیگر ملحقہ شاہرات پر ٹریفک کو منظم انداز سے کنٹرول میں رکھنے کے لئے محکمہ ہائی ویز کے افسران ایس ای طارق ملغانی، ڈپٹی ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ چوہدری طالب حسین رندھاوا ، ایکسین ہائی ویز سید حسنین زیدی کے ہمراہ عباسیہ فلائی اوور، چھلاں والاپُل کا دورہ کیا۔اس موقع پر محکمہ ہائی ویز کی جانب سے ڈپٹی کمشنر کو بریفنگ دی گئی ۔ڈپٹی کمشنر نے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ عباسیہ فلائی اوور سے ملحقہ شاہرات کی توسیع کے لئے فنڈز جلد جاری ہو جائیں گے اور آئندہ ماہ شاہرات سمیت چھلاں والا پُل کی توسیع کے کام کا آغاز ہو جائے گا جس سے ٹریفک کے مسائل حل کرنے میں مدد حاصل ہو گی۔انہوں نے کہا کہ عباسیہ فلائی اوور کے دونوں اطراف منظم انداز سے ٹریفک بہاﺅ کو برقرار رکھنے کے لئے جلد ہائی ویز کے پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ونگ کی ٹیم رحیم یار خان کا دورہ کرے گی جس کی سفارشات پر ٹریفک پلان تشکیل دیا جائے گا۔
رحیم یار خان ڈپٹی کمشنر علی شہزاد انسداد پولیوکی جاری مہم پر عملدرآمد کا جائزہ لینے پنجاب سندھ بارڈر کی چیک پوسٹ کوٹسبزل پولیو ٹرانزٹ پوائنٹ پہنچ گئے، پولیو ٹیموں کی موجودگی، بچوں کو قطرے پلانے اور اندراج کے عمل کو چیک کیا۔انہوں نے کوٹسبزل کے مقام سے صوبہ پنجاب میں داخل اور صوبہ سندھ کی جانب روانہ ہونےوالی بسوں و دیگر پبلک ٹرانسپورٹ میں پانچ سال سے کم عمر بچوں کو پولیو سے بچاﺅ کی ویکسین پلانے کے عمل کا جائزہ لیا۔انہوں نے پولیو ٹیموں کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے ہدایت کی کہ ٹرانسپورٹ اڈوں، ٹرانزٹ پوائنٹس سے کوئی مسافر گاڑی سفر کرنیوالے بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلائے بغیر روانہ نہیں ہونی چاہیے ۔انہوں نے یونین کونسل سنجر پور میں پولیو مہم کا جائزہ لینے کے لئے دیہی مراکز صحت سنجر پور میں ایریا انچارجز کے اجلاس کی صدارت بھی کی اور ان سے پولیو مہم کے دوسرے روز حاصل ہونے والے اہداف بارے معلومات حاصل کیں۔ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ایریا انچارجز ٹیموں کی کارکردگی پر گہری نظر رکھیں اور والدین کو آگہی فراہم کی جائے کہ پانچ سال سے کم عمر بچوں کو پولیو سے بچاﺅ کی ویکسین کے قطرے ضرور پلوائیں تاکہ اس مرض کا ملک سے یکسر خاتمہ کیا جا سکے۔
رحیم یار خان خفیہ اداروں کی رپورٹ پر اسسٹنٹ کمشنر خانپور فاروق احمد کی غیر قانونی کماد خریداری کنڈوں کے خلاف کارروائی ۔
7کنڈوں کو چیک کیا جس میں سے 5کنڈے غیر قانونی طور پر بغیر کسی اجازت و لائسنس کے کماد خریدار ی کر رہے تھے جس پر اسسٹنٹ کمشنر نے حکومت پنجاب کی ہدایات کے مطابق 5غیر مجاز کنڈا مالکان کے خلاف مقدمات اندراج کے لئے مقامی پولیس کو ہدایات جاری کی جبکہ دو کنڈے مالکان کے پاس مطلوبہ اجازت نامہ موجود تھا۔
اسسٹنٹ کمشنر فاروق احمد نے کہا کہ حکومت پنجاب کے احکامات اور ڈپٹی کمشنر علی شہزاد کی ہدایت پر کرشنگ سیزن کو مکمل شفاف بنایا جائے گا غیر قانونی کنڈوں سمیت شوگر ملز کی بھی کڑی مانیٹرنگ کی جا رہی ہے کسی بھی شوگر ملز میں وزن میں کٹوتی برداشت نہیں کی جائے گی اور بلاتفریق قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔
 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »