چینی اور چکن کی قیمتوں کو آگ لگ گئی

hike in chicken price rahim yar khan news

رحیم یارخان:پاکستانی تاجروں کی طرف سے اپنے مخصوص انداز میں”استقبال رمضان”کی تیاریاں تیز ہو گئیں،تین صوبوں کے سنگم کے اضلاع سمیت ملک بھر میں چینی اور چکن کی قیمتوں کو آگ لگ گئی،پرائس کنٹرول کمیٹیاں ائیرکنڈیشنڈ کمروں میں اجلاسوں تک محدود ہوکر رہ گئیں،چکن کا ریٹ 290سے310روپے فی کلوتک جا پہنچا ،چینی 66سے 72 روپے کلو فروخت ہونے لگی ،اس افسوسناک رحجان کی تفصیلات پر شہری پریشان ہیں کہ اس سال سحر وافطار کا انتظام کرنے پچھلے سال سے کہیں زیادہ مہنگا پڑے گا ، کرسمس،ایسٹر اور گڈ فرائیڈے پر مسیحی ممالک میں اشیائے خورد ونوش سمیت عام آدمی کے استعمال کی اکثر اشیا کی قیمتیں گرا دی جاتی ہیں،،جا بجا حیران کن حد تک کم قیمتوں والے سستے بازار سج جاتے ہیں لیکن پاکستان میں اْلٹی گنگا بہتی ہے،یہاں رمضان المبارک اورعیدوں پر قیمتیں بڑھا کر مخلوق خدا کو لوٹا جاتا ہے،،چند ہفتوں سے اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں ”سونامی سپیڈ” سے اضافہ ہوا ہے، پرائس کنٹرول کمیٹیاں ائیر کنڈیشنز کمروں میں اجلاسوں تک محدود ہو کر رہ گئی ہیں ،اور دوکاندار من مانے ریٹس وصول کرنے میں مصروف ہیں،چاروں صوبوں کے دوردراز اضلاع خاص طور پر ٹیل کے ڈسٹرکس میں تو مہنگائی کی صورتحال کنٹرول سے بالکل ہی باہر ہو گئی ہے،اس وقت صورتحال یہ ہے کہ چینی 66 سے 72روپے فی کلو اور چکن 290سے 310روپے فی کلو بیچا جا رہا ہے،ہول سیل مارکیٹ ذرائع کا کہنا ہے چینی کا تھیلا 3200 روپے سے بڑھ کر 3350 روپے تک جا پہنچا ہے اوراگلے چند روز میں 3500 روپے کا ہونے جا رہا ہے جس کی وجہ سے رمضان کے پہلے عشرے میں چینی کی قیمت 75سے 80 روپے فی کلو ہونے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔

hike in chicken price rahim yar khan news

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »