fbpx

خان محمد پر بااثر زمینداروں کا برہنہ کر کے تشدد

رحیم یارخان جناح پارک کے رہائشی خان محمد پر بااثر زمینداروں کا برہنہ کر کے تشدد،اغواء کر کے نامعلوم مقام پر لے گئے،7لاکھ روپے بھتہ کا مطالبہ،رقم نا دینے پر شدید تشدد نا نشانا بنایا،درخت پر الٹا لٹکا کر مقامی لوگوں کے آنے پر فرار ہوگئے۔
کوٹ سمابہ پولیس کا متاثرہ شخص کو انصاف فراہم کرنے سے انکار، متاثرہ شخص کا آئی جی پولیس پنجاب، آرپی او بہاولپور اور ڈی پی او رحیم یارخان سے نوٹس لیکر کارروائی کا مطالبہ۔
جناح پارک کے رہائشی خان محمد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ عاشورہ محرم سے ایک روز قبل اسے رقم دینے کے لئے بااثر افراد نے ترنڈہ سوائے خان بلوایا اور وہاں اسے ایک ڈیرہ پر لے گئے جہاں تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد اس کی رقم دینے کی بجائے مزید سات لاکھ روپے بھتہ طلب کرنے لگے، بعد ازاں الزام علیہان نے ڈیرہ سے نکال کر نزدیکی فصلوں میں لے گے اور گلے میں پھندہ ڈال کر درخت سے لٹکا دیا۔
اسی دوران مقامی لوگوں کے آنے پر الزام علیہان موقع سے فرار ہوگئے اور ترنڈہ سوائے خان کے رہائشیوں نے دیکھنے پر رسیاں کاٹ کر اتارا،جسم پر تشدد کے نشانات،
بے ہوشی کی حالت میں ترنڈہ سوائے خاں کے رہائشی چوکی ترنڈہ سوائے خاں لے گئے،جہاں پر چوکی انچارج نے کارروائی کرنے سے انکار کردیا اور تھانہ کوٹ سمابہ ایس ایچ او رفیق دھریجہ کے پاس لے گئے جہاں ایس ایچ او نے اسے ہراساں کرتے ہوئے گالم گلوچ شروع کردی،
کارروائی کے اصرار پر پولیس نے اس کی درخواست لیکر روانہ کردیا اور تاحال کارروائی عمل میں نہ لائی جاسکی ہے۔ متاثرہ شخص نے پولیس کے اعلیٰ حکام سے نوٹس لیکر انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »