جمعتہ المبارک کے بعد 3بجے احتجاجی مظاہرہ ہوگا

رحیم یار خان جمعیت علماءاسلام کے آزادی مارچ کے پلان سی کی کامیابی کے سلسلہ میں جمعیت علماءاسلام کا ضلعی اجلاس مفتی نعمان حسن لدھیانوی کی میزبانی میں جامع مسجد المصطفیٰ خاتم النبین عباسیہ ٹاﺅن میں منعقد ہوا 
اجلاس میں اجلاس میں جے یو آئی کے مرکزی سینئر نائب امیر وسابق ممبر اسلامی نظریاتی کونسل مولانا محمد یوسف نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی ،اس موقع پر متفقہ فیصلہ کیا گیا کہ آزادی مارچ کے پلان سی کو کامیاب بنانے کے لئے متحدہ اپوزیشن کی کال پرآج جمعتہ المبارک کے بعد 3بجے متحدہ اپوزیشن کی طرف سے ایک بھرپوراحتجاجی جلسہ ہوگا اوراحتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا ،احتجاجی جلسہ م
یں جمعیت علماءاسلام ،مسلم لیگ (ن)،پیپلز پارٹی ،جے یو پی سمیت دیگر سیاسی ومذہبی جماعتوں کے قائدین خطاب کریں گے ،اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جمعیت علماءاسلام کے مرکزی سینئر نائب امیر مولانا محمد یوسف ،ضلعی جنرل سیکرٹری مفتی نعمان حسن لدھیانوی ،قائم مقام ضلعی امیر مولانا عبدالحمید ڈاہر،تحصیل صدر مولانا عامر فاروق عباسی ،حافظ سعید مصطفی چدھڑ،طاہر سعید لغاری،شاہد جالندھری ،مولانا انیس الرحمن قاسمی نے کہا کہ آزادی مارچ کے ثمرات آنا شروع ہو گئے ہیں جلدسلیکٹڈ حکومت کا دھڑن تختہ ہونے والا ہے ،
حکومت اپنا بوریا بستر گول کر لے موجودہ حکومت ہر محاذ پر ناکام ہو چکی ہے مہنگائی وبے روزگاری عروج پر ہے اورتمام شعبہ ہائے زندگی متاثر ہوئے ہیں ،بیرونی سازشوں سے ایک غلط حکومت وجود میں آئی جس کے خلاف جمعیت علماءاسلام نے 15ملین مارچ کئے اس کے بعد آزادی مارچ کا مرحلہ شروع کیا جو کامیابی کی طرف گامزن ہے ہمیں عوام کی مکمل حمایت حاصل ہے ہم سب ایک پیج پر ہیں عوام وقت کا انتظارکرے ،جمعیت علماءاسلام آزادی مارچ کو منطقی انجام تک پہنچاکر دم لے گی ،
اب متحدہ اپوزیشن ہر ضلعی ہیڈ کواٹر پر احتجاجی جلسے اورمظاہرے کرے گی ،موجودہ حکومت قادیانیت کو فروغ دے رہی ہے اب وقت کا تقاضہ ہے کہ ایک آزاداورمنصفانہ الیکشن انتخابات کرائے جائیں ،اجلاس میں حافظ عثمان لدھیانوی ،مولانا غلام حسین ،قاری کفایت اللہ درخواستی ،مفتی ارشد ،فتوح اللہ ،طیب عثمانی ،عمر فاروق حسنی،حافظ عبدالصمد اعوان ،بابو لیلا رام سمیت دیگر عہدیداران موجودتھے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »