سوشل میڈیا

یہ کوئی نیو یارک کا کلب نہیں بلکہ خواجہ فرید آئی ٹی یونیورسٹی ہے


یہ کوئی نیو یارک کا کلب نہیں بلکہ خواجہ فرید آئی ٹی یونیورسٹی ہے

جہاں حو ّا کی بیٹی اور بیٹوں کےلیے یونیورسٹی انتظامیہ نے ’’کنسرٹ نائٹ‘‘ کا اہتمام کیا تا کہ قوم کو میوزیکل معمار تیار کر 
کے دئیے جائیں۔کنسرٹ نائٹ کے لیے ’’سوچ بینڈ‘‘ کو لاہور سے مدعوکیا گیا۔
یونیورسٹی کے ’’ڈائریکٹر سٹوڈنٹ آفیئر‘‘ نے یونیورسٹی کی اجازت سے بنائی گئی ’’سرکش میوزیکل سوسائٹی‘‘ کے ذریعے اس پروگرام کا اہتمام کیا۔پروگرام کی دعوت کو عام کرنے کے لیے آؤٹ سائیڈرز کو بھی یونیورسٹی داخلہ کی اجازت تھی۔
ڊضلعی انتظامیہ کے لیے سوالیہ نشان ہے کہ جس بزرگ نام کے ساتھ یہ یونیورسٹی منسوب ہے کیا ان کی تعلیمات یہ تھیں۔ 
اور انتظامیہ کی اجازت کے بغیر یہ پروگرام کیسے ہو گیا؟ یہ بھی بتا نا ضروری ہے کہ جب بھی اس طرح کے پروگرامات ہوتے ہیں اس دن طلبہ و طالبات کو شریک کروانے کی خاطر بس سروس جبراََ بند کر دی جاتی ہےتا کہ سٹوڈنٹ چاہتے ہوئے بھی گھر واپس نہ جا سکیں ۔ اس سے پہلے بھی ایک دفعہ یونیورسٹی انتظامیہ نے والدین کے دباؤ پر پروگرام منسوخ کیا تھا۔
مطالبہ ! ضلعی و تعلیمی انتظامیہ سے گزارش ہے کہ شیطان صفت ’’ڈائریکٹر سٹوڈنٹ آفیئر‘‘کو فوری طور پر معطل کیا جائے۔
ورنہ 8000طلبہ ،طالبات کےوالدین یونیورسٹی انتطامیہ اور DCOآفس کا گھراؤ کرنے پر مجبور ہونگے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button