کسانوں کواوپن پالیسی کے ذریعے بلاتفریق سبسڈی دی جائے

پاکستان کسان اتحاد کے ڈسٹرکٹ آرگنائزر جام ایم ڈی گانگا، ضلعی صدر ملک اللہ نواز مانک حاجی نژیر احمد کٹپال نے خصوصی کسان پتھاری کے دوران کسانوں کے مختلف ایشوز پر بجٹ کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کسانوں کوٹوکن نہیں اوپن پالیسی کے ذریعے بلاتفریق سبسڈی دی جائے.
کھاد بیج پر دی جانے والی اربوں روپے کی سبسڈی کا آڈٹ کرایا جائے.بجٹ میں کھادوں کے ریٹ کم کیے جائیں.زرعی ٹیوب ویلز ٹیرف میں کمی کی جائے.نہروں کی ری ماڈلنگ کے لیے بجٹ میں خصوصی فنڈز دیئے جائیں.مہنگائی کے تناسب سے فصلات کے ریٹس بڑھائے جائیں.زراعت اور کسانوں کے حالات بہتر کیے بغیر قومی معیشت کے حالات کسی صورت بھی بہتر نہیں کیے جا سکتے. قومی زراعت کے تحفظ کو سامنے رکھتے ہوئے زرعی درآمدات و برآمدات کی پالیسیاں مرتب کی جائیں. نہروں کی اصلاح اور کسانوں کی فلاح کو بجٹ میں اہمیت دی جائے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »