رحیم یار خان : ماڈل تھانہ اقبال آباد کی حدود میں قبضہ مافیا سرگرم

رحیم یار خان : ماڈل تھانہ اقبال آباد کی حدود میں قبضہ مافیا سرگرم‘ درجنوں مسلح افراد نے عدالتی حکم امتناعی کے باوجود رات گئے متنازعہ اراضی پر پانی لگایا اور فائرنگ کی‘ متاثرہ فریق کی طرف سے کی گئی 15 پر کال کے بعد اقبال آباد تھانہ کی پولیس موقع پر بھی گئی

لیکن کارروائی کیئے بغیر واپس آ گئی اور 20 گھنٹے گزرنے کے بعد بھی تاحال پولیس نے مقدمہ درج کیا نہ مسلح افراد کو پکڑا جبکہ مسلح افراد اب بھی موقع پر بیٹھے سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ سندھ اور بلوچستان کے جرائم پیشہ گروہ پر مشتمل قبضہ گروپ کو بعض پولیس ملازمین سمیت مقامی با اثر شخصیات کی پشت پناہی حاصل ہے جنہوں نے قبضہ کامیاب کرانے کیلئے متنازعہ قیمتی اراضی کا کچھ حصہ بھتہ اور تحریری معاہدہ کی صورت میں اپنے نام کر رکھا ہے۔

مزکورہ زمین پر قبل ازیں بھی مخالفین نے ھمیں قتل کے جھوٹے مقدمہ میں پھنسایا تھا‘ وزیراعظم پاکستان کے ویژن کے مطابق حکومت پنجاب ضلعی انتظامیہ اور پولیس قبضہ گروپ کے خلاف کارروائی کی پابند ہے مگر تھانہ اقبال آباد میں آج بھی چٹی دلالوں کا راج اور پولیس ان کے زیر کنٹرول ہے۔

15 پر کال کرنے پر بھی الٹا متاثرین کے خلاف مقدمات درج کر لیئے جاتے ہیں۔آئی جی پنجاب‘ آر پی او بہاولپور اور ڈی پی او رحیم یار خان اسد سرفراز خان واقعات کا نوٹس لیں اور قبضہ مافیا اور انکے سرپرستوں کے خلاف کارروائی کریں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »