پیپلزپارٹیرحیم یارخان

پیپلز پارٹی شعبہ خواتین کا تنظیمی اجلاس جمالدین والی میں منعقد ہوا

رحیم یارخان پاکستان پیپلز پارٹی شعبہ خواتین ضلع رحیم یارخان کا تنظیمی اجلاس جمالدین والی سیکرٹریٹ میں منعقد ہوا جس کی میزبانی کے فرائض ضلعی صدر سردار حبیب الرحمان گوپانگ اور ضلعی انفارمیشن سیکرٹری مرشد سعید ناصر نے سرانجام دئے ۔

اجلاس کی صدارت شعبہ خواتین جنوبی پنجاب کی صدر و ایم پی اے شازیہ عابد نے کی۔اجلاس میں ضلعی عہدیداران و کارکنان کی کثیر تعداد شریک تھی ۔

اس موقع پر ایم پی اے شازیہ عابد ،سینئر نائب صدر جنوبی پنجاب راضیہ رفیق،انفارمیشن سیکرٹری جنوبی پنجاب شازیہ لودھی،ضلعی صدر نوشابہ اشرف نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو جنوبی پنجاب کے صدر مخدوم احمد محمود کی ہدایت پر شعبہ خواتین کو فعال کرنے کے لئے تنظیم سازی کے لئے مشاورت جاری ہے بہت جلد شعبہ خواتین کی تنظیمیں مکمل کر لی جائیں گی

اس سلسلہ میں آج ضلع رحیم یارخان میں بلایا گیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ چیئر مین بلاول بھٹو بہت جلد ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی بے روزگاری اور لاقانونیت سے عوام کو آگاہ کرنے کے لئے ملک بھر میں جلسوں کا آغاز کرنے جا رہے ہیں جس کا آغاز جنوبی پنجاب سے ممکن سے کیا جائے گا۔ جس میں خواتین اپنا بھرپور قردار ادا کریں گی ۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت ملک میں جس طرح لاقانونیت ہے اور مہنگائی کے ہاتھوں عوام خودکشیاں کرنے پر مجبور ہیں اس پر بھرپور آواز اٹھا ئی جا سکے تاکہ ظالم حکمرانوں سے نجات مل سکے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کی قیادت نے ہر دور اقتدار میں ملکی ترقی کے لئے کام کیا ہے جس کی سزا ہماری قیادت کو دی جاتی رہی ہے مگر اب جیالے اپنی قیادت ملک اور عوام کے مفاد وتحفظ کے لئے اپنا بھرپور اد اکریں گے۔

اجلاس میں سابق صدر پاکستان آصف علی زرداری ،بی بی فریال تالپور ودیگر پارٹی رہنماﺅں کی گرفتاریوں پر مذمتی قرادداد بھی منظور کی گئی۔اجلاس میں شعبہ خواتین کی ضلع بھر سے آنے والی عہدیداران و کارکنان خواتین میں صائمہ گیلانی،منزہ عرفان،خالدہ مغل ،شمائلہ،فوزیہ اکرام منزہ زشہزاد،شہناز محمود،ساجدہ صابر،نجمہ صفدر،نذیراں انور،انعم اکرم سمیت کثیر تعداد میں شریک تھیں۔

 خواجہ رضوان عالم
خواجہ رضوان عالم

 پاکستان پیپلز پارٹی جنوبی پنجاب کے سینئر نائب صدر خواجہ رضوان عالم ،ملتان کے ضلعی جنرل سیکرٹری راﺅ ساجد اور رحیم یارخان تحصیل کے انفارمیشن سیکرٹری واجد چانڈیہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت احتساب نہیں بلکہ پی پی قیادت سے سیاسی انتقام لے رہی ہے

جس کی بھرپور مذمت کرتے ہیں انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی میں گھروں سے بھاگے ہوئے افراد شامل ہیں جو پی ٹی آئی کی لانڈری میں دھل کر صاف شفاف ہو رہے ہیں۔
جس طاقتیں پی ٹی آئی کو اقتدار میں لے کر آئی ہیں جب انہوں کے ہاتھ اٹھا لیا تو ماضی کی سیاسی جماعتوں کی طرح انکا بھی شرازہ بکھر جائے گا۔نیب اگر صاف اور شفاف احتساب کرتی تو پی ٹی آئی میں شامل کرپشن میں مطلوب افراد بھی کٹہرے میں لائے جاتے انکا احتساب سے بالاتر ہونا ثابت کرتا ہے کہ جیلوں میں بند کرپٹ نہیں بلکہ سیاسی انتقام کا شکار ہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو بہت جلد ملک گیر احتجاجی جلسوں کا سلسلہ شروع کرنے والے ہیں جن کا اغاز جنوبی پنجاب سے کیا جائے گیا۔
انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کی پاکستان پیپلز پارٹی سیاسی و اخلاقی طور پر بھرپورحمایت حاصل ہے
 

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button