fbpx

رحیم یارخان میں پولیس نے 1ہزار موٹرسائیکلوں کو تھانوں میں بند کر دیا،شہری پریشان

رحیم یارخان : پولیس کی ضلع بھر میں ناکہ بندی ہزار بلا نمبر و رجسٹریشن 1000 موٹر سائیکلیں تھانوں میں بند، متعدد اشتہاری مجرمان گرفتار، ڈبل سواروں کے خلاف مقدمات درج۔

ناکہ بندی پر عوام کو کورونا سے محفوظ رہنے کے ایس اوپی پر عمل درآمد کرنے کی اور ماسک پہننے کی ترغیب دی گئی۔ تفصیل کے مطابق ڈی پی او منتظر مہدی کی ہدایات اور احکامات پر ضلع میں عوام الناس کی جان وماک کا تحفظ یقینی بنانے، امن و امان کا قیام برقرار رکھنے،

مجرمان کی نقل و حرکت کو محدود کرنے اور جرائم پیشہ عناصر کی گرفتاری و انسداد جرائم کی خاطر ضلع بھر میں چوبیس گھنٹے ناکہ بندی کا سلسلہ جاری ہے۔

ناکہ بندی میں اب تک ضلع کے تمام تھانوں میں ایک ہزار ایسی موٹر سائیکلیں دفعہ 550 اور دفعہ 134 پولیس ایکٹ کے تحت بند کی جا چکی ہیں جن کے مالکان موقع پر کسی بھی قسم کا ملکیتی ثبوت پیش کرنے سے قاصر رہے ہیں یا پھر ان کی رجسٹریشن نہیں تھی اور نمبر پلیٹس آویزاں نہ کی گئیں تھیں۔

اسی دوران کپی شراب کی متعدد بوتلیں برآمد ہونے پر ملزمان گرفتار کئے اور دو اشتہاری مجرمان بھی ناکہ بندی پر پولیس نے پکڑ لیے جبکہ دو ڈبل سواروں کے خلاف مقدمات کا اندراج بھی کیا گیا ہے۔ پولیس نے عوام کو ناکہ بندی کے دوران کورونا محفوظ رہے کے بارہ میں آگاہی بھی فراہم کی اور ماسک پہننے کی ترغیب دی۔

ڈی پی او منتظر مہدی کی ہدایت پر ضلع بھر میں  503 مساجد و امام بارگاہوں میں نماز جمعہ کے پر امن اجتماعات اور کورونا کے خلاف حکومتی اقدامات اور ایس او پیز کو موئثر رکھنے کے لیے سکیورٹی کے موئثر اقدامات کئے گئے تھے۔ مسلح اہلکاروں نے الرٹ رہ کر اپنے فرائض سر انجام دئیے اور ایس ایچ اوز نے چیکنگ کے زریعے مساجد انتظامیہ کو ایس او پیز پر عمل درآمد یقینی بنانے کی ہدایت کی اور ان کی نگرانی بھی کی جبکہ اہلکاروں اور مقامی مساجد و امام بارگاہ انتظامیہ کی جانب سے فراہم کردہ رضاکاروں نے بھی نمازیوں کو ماسک پہن کر داخلے کی اجازت دی اور مساجد میں فاصلے کے لیے لگائے گئے نشانات پر نماز کی ادائیگی کے لیے ہدایت کی۔ عوام کی جانب سے بھی مثبت رد عمل کا مظاہرہ کیا گیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close