fbpx

رونتی کچے میں ڈاکوؤں کے خلاف آپریشن جاری, 4 ڈاکو زخمی 7 گرفتار

رحیم یارخان :اوباڑو : رونتی کچے میں ڈاکوؤں کے خلاف آپریشن جاری سندھ پنجاب کشمور، رحیم یارخان، گھوٹکی کے 150 سے زائد ڈاکو موجودگی کا انکشاف
 پولیس کمانڈو نے کاروائی کرتے ہوئے ڈاکوؤں کے تین مرکزی مورچوں پر قبضہ جما لیا 4 ڈاکو زخمی 7 گرفتار درجنوں کمین گاہوں کو آگ لگادی گئی، ایس ایس پی گھوٹکی فرخ علی لنجار
اوباڑو کے قریب رونتی کچے کے علاقے میں ڈاکو ؤں کے خلاف گھوٹکی پولیس کا پانچوں روز بھی آپریشن جاری ہے ایس ایس پی گھوٹکی فرخ علی لنجار کے مطابق پولیس کمانڈوز نے کاروائی کرتے ہوئے ڈاکو ؤں کے تین مرکزی مورچوں پر قبضہ جما کر کیا جبکہ مقابلے کے دوران فائرنگ سے 4 ڈاکو زخمی اور 7 گرفتار کر کیا گیا ہے جبکہ ایک سو سے زائد ڈاکو کچے کا علاقہ چھوڑ کر فرار ہو گئے ہیں جن میں سندھ پنجاب گھوٹکی، کشمور، اور رحیم یارخان کے 150 سے زائد ڈاکو موجود تھے ڈاکوؤں میں جانا انڈھڑ گینگ، سلطو شر، راحب شر گینگ موجود ہیں ڈاکوؤں کی جانب سے اے پی سی پر راکٹ لانچر کے فائر سے اے پی سی الٹنے سے ایک ایس ایس ایچ او سرحد شمشاد پٹھان اور ایک پولیس اہلکار باگن چھوٹو اور مقامی شخض عظیم سیلرو فائرنگ کی زد میں آکر زخمی ہو گئے
زخمیوں کی طبی امداد کے لئے تحصیل اسپتال اوباڑو منتقل کر دیا گیا ہے پولیس کی بھاری نفری کچے کے علاقے میں ڈاکوؤں کے خلاف آپریشن جاری رکھے ہوئے ہے اور وقفہ وقفہ سے فائرنگ کا سلسلہ جاری ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close