fbpx

اسسٹنٹ کمشنر صادق آباد نے 4ہزار نفوس پر مشتمل آبادی چک نمبر156پی میں واٹر سپلائی کا پانی بند کردیا,

3روز سے علاقہ کربلا کا منظر پیش کرنے لگا‘شدید گرمی کے موسم میں روزہ دار بلبلا اٹھے

اسسٹنٹ کمشنر صادق آباد نے 4ہزار نفوس پر مشتمل آبادی چک نمبر156پی میں واٹر سپلائی کا پانی بند کردیا‘3روز سے علاقہ کربلا کا منظر پیش کرنے لگا‘شدید گرمی کے موسم میں روزہ دار بلبلا اٹھے،زمینی پانی کڑوا ہونے کے باعث روزہ داروں کو افطاری اور سحری کے اوقات کار میں شدید مشکلات کا سامنا‘سینکڑوں مکینوں کا انتظامیہ کیخلاف شدید احتجاج نعرے بازی،ہمارے خلاف سیاسی انتقامی کارروائیاں کی جارہی ہیں‘فوری طورپر پانی بحال کیاجائے،احتجاجی مظاہرین کا مطالبہ۔ تفصیل کے مطابق چک نمبر 156پی صاد ق آباد کے مکینوں چوہدری محمد عرفان نمبردار‘ چوہدری قمر نمبردار‘ محمد یوسف‘ چوہدری حید ر علی‘ محمد شہباز‘ تنویر احمد‘ عبدالغفور‘ محمود احمد‘ ممتا ز احمد‘ ندیم انجم‘ چوہدری محمد صدیق سمیت سینکڑوں افراد نے اسسٹنٹ کمشنر صاد ق آبادکیخلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیاکہ ہمارے علاقہ کی آبادی چار ہزار نفوس پر مشتمل ہے جن کے 350واٹر سپلائی کے کنکشن لگے ہوئے ہیں، اس علاقہ سے گیارہ کلو میٹر دور واٹر ٹربائن نصب ہیں جہاں سے مذکورہ علاقہ کو پانی کی سپلائی دی جاتی ہے، یہ واٹر سپلائی سکیم سی سی بی منصوبے کے تحت لگائی گئی تھی جس میں مقامی لوگوں نے 25فیصد رقم ادا کی تھی،واٹر سپلائی سکیم پر ذاتی ملازم تعینات کیا گیا جس کی تنخواہ بھی ہر ماہ ہم لوگ ادا کرتے ہیں سکیم پر نصب بجلی کا میٹر بھی ہمارے نام پر لگا ہواہے جبکہ تمام اخراجات مکین اپنی مد د آپ کے تحت ادا کرتے ہیں، موجودہ واٹر سپلائی سکیم علاقہ کے مکینوں کا پانی پورا کرنے کیلئے ناکافی ہے۔ انھوں نے الزام عائد کیاکہ سیاسی انتقامی کارروائی کرتے ہوئے مقامی پی ٹی آئی رہنماؤں کے کہنے پر اسسٹنٹ کمشنر نے اس بات کا جواز بنایا کہ چک نمبر 156پی سے تین کلو میٹر دوربستی بھائیاں میں بھی اسی واٹر سپلائی سکیم سے پانی دیاجائے ہمارے انکار پر اے سی صادق آباد نے ہماری سکیم بھی بند کروا دی، جس سے علاقہ میں تین روز سے پانی کی فراہمی معطل ہو چکی ہے، شدید گرمی کے موسم میں عوام کو مشکلات کا سامنا ہے، علاقہ کربلا کا منظر پیش کر رہاہے عوام کو سحری اور افطار کے وقت پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے جبکہ زمینی پانی کڑواہونے کے باعث استعمال کے قابل نہیں ہے،انھوں نے کہا کہ اسسٹنٹ کمشنر پی ٹی آئی کے رہنماؤں کا آلہ کار بنا ہوا ہے، اگر فوری طورپر پانی کی سپلائی بحال نہ کی گئی تو ڈپٹی کمشنر آفس رحیم یارخان کے باہر احتجاج اور دھرنا دینے پر مجبور ہوں گے، انھوں نے وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار‘ کمشنر بہاول پور اور ڈپٹی کمشنر رحیم یارخان سے فوری نوٹس لیکر ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close