fbpx

رحیم یارخان میں مچھلی کے شکاریوں سے بھتہ وصولی پر احتجاج کیا گیا

رحیم یار خان:مچھلی کا شکار کرنے والے درجنوں لائسینس ہولڈر کا محکمہ فشریز کے آفس کے باہر احتجاجی مظاہرہ بااثر افراد کی جانب سے مچھلی کے شکار پر بھتہ وصول کرنے اورتشدد کرکے سامان چھننے  والوں کے خلاف کاروائی کا مطالبہ۔
تفصیل کے مطابق محکمہ فشریز کے لائسینس یافتہ مچھلی کے شکار کا شوقین افراد جو درجنوں کی تعداد میں تھے نے محکمہ فشریز کے آفس کے باہر اپنے لائسنس اُٹھا کر احتجاجی مظاہرہ کیا
اس موقع پر سعید اختر،ریاض رحمانی،اصغر رضا،محمد اکرم سید شبر شاہ،مقدس رضا، اور دیگر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کےضلع رحیم یار خان میں سیکڑوں لوگ جن کو مچھلی کے شکار کا شوق ہے
فیسیں ادا کر کے شکار کے لیے لائسینس حاصل کررکھے ہیں
اس کے باوجود ان کو شکار کرنے میں پریشانی کا سامنا ہے انہوں نے کہا کے جب ہم شکار کے لیے جاتے ہیں تو بااثر لوگوں کے کارندے بھتہ وصولی کے لیے ان کے ساتھ زیادتی کرتے ہیں،
سامان چھین کر ان پر تشدد کیا جاتا ہے اور پانچ ہزار روپے کی بھتہ پرچی کا مطالبہ کرتے ہیں نہ دینے کی صورت میں دھمکیاں  دیتے ہیں
انہوں نے کہا کے ہم نے ضلعی آفسر فشریز کو تحریری درخواست بھی جمع کرا دی ہے ہمارا مطالبہ ہے ان کے خلاف کاروائی کرکے ہمارے قانونی شکار کو آسان بنایا جائے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »