fbpx

کورونا:رحیم یارخان کے قرنطینہ سنٹروں(quarantine centers)میں تعداد کم پڑ گئی

کورونا میں اضافہ:رحیم یارخان کے قرنطینہ سنٹروں (quarantine centers)میں تعداد کم پڑ گئی
رحیم یار خان :ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے کہا ہے کہ کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں اضافہ کے پیش نظر شیخ زیدہسپتال انتظامیہ اور ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی ہسپتالوں اور قرنطینہ مراکز (quarantine centers)میں اپنی استعداد کار وطبی سہولیات میں مزید اضافہ کرے ۔
یہ ہدایات انہوں نے ضلعی رابطہ کمیٹی برائے انسداد کورونا کے اجلا س کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔اجلاس میں سی ای او ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر سخاوت علی رندھاوا، ڈسٹرکٹ منیجر این آر ایس پی ثمینہ اشرف سمیت دیگر متعلقہ اداروں کے افسران موجو دتھے۔ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ کورونا وائرس کے تیزی سے پھیلاﺅ کے باعث انتظامیہ حکومتی ہدایات پر عملدرآمد کو یقینی بنا رہی ہے تاہم شہریوں میں بھی احساس ذمہ داری اجاگر کرنا ہو گی کہ وہ بلا ضرورت گھروں سے باہر نہ نکلیں جبکہ ماسک کے استعمال کو اپنے معمولات زندگی میں شامل رکھیں۔
انہوں نے کہا کہ عوامی تعاون کے بغیر حکومتی اقدامات اور انتظامیہ کی کوششیں بے نتیجہ ہیں ہم سب کو مل کر کورونا کے خلاف ایک طویل جنگ لڑنا ہے۔انہوں نے شیخ زید ہسپتال انتظامیہ اور ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کو ہدایت کی کہ وہ ڈاکٹرز اور طبی عملہ کی حفاظت یقینی بنانے کے لئے حفاظتی ایس او پیز پر مکمل عملدرآمد کرائیں جبکہ ہسپتالوں میں خدمات سر انجام دینے والے ڈاکٹرز و طبی عملہ تمام حفاظتی اقدامات پر عمل کرتے ہوئے خدمات سر انجام دے۔انہوں نے این آر ایس پی کی جانب سے ضلع میں عوامی آگہی مہم کا جائزہ لیتے ہوئے کہا کہ این آر ایس پی مزید موثر انداز سے شہریوں کو کورونا وائرس کے پھیلاﺅ کو روکنے اور حفاظتی اقدامات پر عملدرآمد کرنے کے لئے آگہی فراہم کرے۔اجلاس میں سی ای او ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر سخاوت علی رندھاوا نے ضلع میں کورونا وائرس کی موجودہ صورتحال اور دستیاب طبی وسائل بارے تفصیلی بریفنگ دی جبکہ ڈسٹرکٹ منیجر این آر ایس پی ثمینہ اشرف نے ضلع کے مختلف علاقوں میں شہریوں کو فراہم کی جانے والی آگہی مہم بارے آگاہ کیا۔(quarantine centers) ٹڈی دل کا اجلاس
ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے ضلعی مانیٹرنگ و انسدادی کمیٹی برائے ٹڈی دل کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے ہدایت کی کہ حکومت پنجاب کی ہدایت کے مطابق تمام تحصیلوں میں مواضعات کی سطح پر تشکیل دی جانے والی کمیٹیوں کو جلد از جلد تربیت فراہم کرتے ہوئے فعال کیا جائے تاکہ وہ حالیہ ٹڈی دل حملوں سے فصلوں کے پہنچنے والے نقصانات کا جائزہ لےکر رپورٹ مرتب کریں۔انہوں نے یہ ہدایت ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کیں جس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(ریونیو)ڈاکٹر جہانزیب حسین لابر، اسسٹنٹ کمشنر چوہدری اعتزاز انجم، ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت موجود تھے جبکہ دیگر تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنرز نے بذریعہ ویڈیو لنک اجلاس میں شرکت کی۔ڈپٹی کمشنر نے تمام اسسٹنٹ کمشنرز کو ہدایت کی کہ مواضعات سطح پر تشکیل دی جانے والی ٹیمیں فصلوں کے پہنچنے والے نقصانات کے اندازہ کے ساتھ ساتھ ٹڈی دل کی سرویلنس اور انسدادی کارروائیوں میں بھی اپنا کردار ادا کریں گی۔اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ ضلع بھر میں مواضعات کی سطح پر کمیٹیاں تشکیل دی دی گئی ہیں جس کے ممبران میں محکمہ زراعت، لائیو سٹاک، ریونیو، نمبر داران، مقامی کاشتکاران سمیت دیگر افراد شامل ہیں اور ان کی تربیت کا عمل بھی جلد مکمل کر لیا جائے گا۔
مختلف مارکیٹ اور بازاروں کا دورہ
ڈپٹی کمشنر علی شہزاد کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر رحیم یار خان چوہدری اعتزاز انجم نے حکومتی ایس اوپیز پر عملدرآمد کا جائزہ لینے کے لئے مختلف مارکیٹ اور بازاروں کا دورہ کیا۔کورونا وائرس سے تحفظ اور پھیلاﺅ کو روکنے کے لئے حکومت کی جانب سے جاری حفاظتی گائیڈ لائن پر عملدرآمد نہ کرنے پر 5دکانوں کو سربمہر کر دیا۔اسسٹنٹ کمشنر چوہدری اعتزاز انجم نے تاجروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس کے تیزی سے پھیلاﺅ کو روکنے کےلئے ہر شخص کو ایس او پیز پر عمل کرنا ہو گا۔انہوں نے تاجروں کو کہا کہ اپنی دکانوں پر ماسک، دستانے پہنے اور سماجی فاصلے کو برقرار رکھنے کی ہدایات پر مبنی پوسٹر لگائیں اور ان پر نہ صرف خود عمل کیرں بلکہ خریداری کے لئے آنے والے صارفین کو بھی حفاظتی اقدامات پر عمل کرنے کی ترغیب دیں۔انہوں نے حکومتی ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے پر 5دکانوں کو سیل بھی کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »