رحیم یارخان میں لیڈی ڈاکٹر سمیت ایک ہی خاندان کے 11 افرادمیں کورونا وائرس کی تصدیق

کورونا وائرس کی تصدیق

رحیم یار خان میں کورونا کیس میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے، شیخ زید ہسپتال میڈیکل کالونی کی رہائشی لیڈی ڈاکٹر اورایک ہی خاندان کے 11 افراد سمیت مزید 15 مریضوں میں کوروناوائرس کی تصدیق ہونے سے کل تعداد 41 ہوگئی

جبکہ آئسولیشن وارڈ میں زیر علاج ایک اور مریض بھی دم توڑ گیا مرنے والوں کی تعداد بھی 4 ہوگئی مرنے والوں میں دو خواتین بھی شامل ہیں

جبکہ نئے مریضوں میں ایک ہی خاندان کے دو حقیقی بھائی، ایک بھائی کی اہلیہ ان کے 4 بچے ایک لیڈی ڈاکٹر انکے دو بچے اور ایک گھریلو ملازمہ شامل ہیں جنہیں قرنطینہ کر دیا گیا ہے

رحیم یار خان کے معروف فزیشن و شیخ زید ہسپتال میڈیکل وارڈ کے کنسلٹنٹ انسان دوست ڈاکٹر معین اختر ملک کے بہنوئی عامر نواز کا بڑا بھائی بیرون ملک سے واپس آیا تو اس میں کورونا وائرس موجود تھا

جس سے وائرس انکے بھائی عامر نواز اور مسز عامر نواز اور انکے چار معصوم بچوں سمیت ڈاکٹر معین اختر ملک کی اہلیہ جو کہ شیخ زید ہسپتال میں لیڈی ڈاکٹر ہیں انہیں اور انکے دو بچوں اور گھریلو ملازمہ میں منتقل ہوگیا

جنہیں انکی اپنی پرائیویٹ ہسپتال میں ہی قرنطینہ کرتے ہوئے علاج شروع کر دیا گیا ہے جبکہ عامر نواز انکی اہلیہ اور بچوں کو شیخ زید آئسولیشن وارڈ میں منتقل کیا گیا

جہاں عامر نواز کی حالتِ تشویشناک بتائی جاتی ہے جبکہ ان کے بڑے بھائی مظفرگڑھ ہسپتال میں زیر علاج ہیں

جہاں انکی حالت تسلی بخش ہے جبکہ ڈاکٹر معین اختر ملک میں کورونا وائرس کی تصدیق نہیں ہو سکی

اسی طرح جاں بحق مریض چک نمبر 87 کے عبدالستار ولد خورشید احمد جو کہ کراچی میں ڈرائیور کرتا تھا اور 2 اپریل کو وہاں سے اپنے آبائی علاقے میں آیا

جہاں طبیعت خراب ہونے کے سبب اس کا ٹیسٹ کیا گیا تو وہ پازیٹو آیا جس کے بعد محکمہ صحت نے اسے قرنطینہ سنٹر منتقل کر دیا گیا

جو کہ گزشتہ رات خالق حقیقی سے جا ملا ورثاء کی اجازت کے بعد ریسکیو 1122 نماز جنازہ کے بعد میت کی تدفین کردی یاد رہے کہ دو خواتین سمیت تین مریض

قبل ازیں جاں بحق ہو چکے مرنے والوں کی کل تعداد 4 ہو گئی جبکہ شیخ زید ہسپتال سمیت قرنطینہ سینٹرز میں 41 مریض زیر علاج ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close