fbpx
رحیم یارخانضلعی انتظامیہ

دکھی انسایت کی خدمت ہی مقصد زندگی ہونا چاہیے،حاجی نواز کھوکھر

Ramzan dastarkhwan

چیئرمین پنجاب مدنی دستر خوان حاجی نواز کھوکھر نے کہا ہے کہ دکھی انسایت کی خدمت ہی مقصد زندگی ہونا چاہیے،
مثبت سوچ ہی ہمار ے مذہب، تہذیب اور ثقافت کی پہچان ہے، اچھی سوچ اچھے فعل کی طرف لیجاتی ہے، کسی کا نقصان کرکے اپنے لئے فائدہ سوچنے والے معاشرے کے ناکام ترین لوگ ہیں بہتر انسان وہی ہیں جو اللہ تعالیٰ کی جانب سے فراہم کردہ وسائل کو دکھی انسایت کیبہتری کے لئے خرچ کریں۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈپٹی کمشنر آفس کمیٹی روم میں مدنی دستر خوان کے انعقاد کے حوالہ سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر (ایچ آر)ریاست علی، ڈی او انٹر پرائزز بلال احمد ، صدر کریانہ ایسوسی ایشن چوہدری اسد غفار، ترجمان ضلعی انجمن تاجران حاجی اکبر علی شاہین سمیت مختلف کاروباری تنظیموں کے عہدیداران ونمائندگان موجود تھے۔

حاجی نوازاختر نے کہا کہ2010ء سے مدنی دستر خوان کا آغاز پنجاب کے چند اضلاع سے کیا گیا تھا مگر آج پاکستان کے مختلف صوبوں کے شہروں میں مدنی دستر خوان کامیابی سے چل رہے ہیں جہاں پر ضرورت مندوں کو اعلیٰ معیار کا کھانا مفت فراہم کیا جا رہا ہے اور وہ وایک وقت کی روٹی باعزت طریقہ سے کھاتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ضلع رحیم یار خان کی انتظامیہ ، مخیر حضرات اور کاروباری تنظیموں نے ہمیشہ فلاحی کاموں میں ہمیشہ لیڈنگ رول ادا کیا اور مدنی دستر خوان کے حوالہ سے بھی ضلع رحیم یار خان کی انتظامیہ، مخیر حضرات او رکاروباری تنظیمیں ایک ممتاز مقام رکھتی ہیں۔
انہوں نے کہا کہ سابقہ رمضان المبارک میں ضلع رحیم یار خان میں سحر و افطار کے موقع پر مدنی دستر خوان لگائے گئے اور امید ہے کہ آمدہ رمضان المبارک میں بھی اس روایت کو برقرار رکھا جائے گا جبکہ کئی دسترخوان تو سالہا سال چل رہے ہیں.
جس پر میں ان کے منتظمین کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔انہوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ کے نزدیک بھی سب سے بڑا جر اور نیکی بھوکے کو کھانا کھلانا ہے اور ہم سب خوش قسمت ہیں کہ اللہ تعالیٰ نے اس نیک مقصد کے لئے ہمارا انتخاب کیا ہے۔
اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر ریاست علی، چوہدری اسد غفار ودیگر نے اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا اور بتایا کہ کئی مدنی دستر خوان ضلع بھر میں تسلسل کے ساتھ چل رہے ہیں جہاں پر سینکڑوں افراد باعزت انداز سے کھانا کھاتے ہیں۔

Ramzan dastarkhwan

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close