صادق آباد میں سکول پر حملہ تین افراد زخمی۔

sadiqabad Protest Rahim yar khan news

صادق آباد: تعلیم دشمن عناصر کو محلے میں سکول بنا کر قوم کے نونہالوں کو زیور علم سے آراستہ کرنا ایک آنکھ نہ بھایا۔شرپسندوں نے سکول پر حملہ کرکے مالک سمیت تین افراد کو زخمی کردیا۔
 ڈنڈوں سوٹوں سے مسلح شرپسندوں نے بستی میاں صاحب کے نجی سکول میں گھس کرسکیورٹی گارڈ کو یرغمال بنالیا اور اس سے اسلحہ چھین لیا ۔حملہ آوروں نے سکول کے مالک افضل مقبول کو شدید زدوکوب کیا،شرپسند عناصر سکول مالک کو گھسیٹتے رہے اور سکول میں توڑ پھوڑ بھی کی ۔ عملہ کے ارکان سے بھی مار پیٹ کی گئی  جس سے تین افراد زخمی ہوگئے۔
شرپسندوں کی کارروائی سے سکول کے طلباوطالبات میں شدید خوف و ہراس پھیل گیا اور وہ کلاس رومز میں چھپ گئے ۔
واقع کی اطلاع ملنے پر سٹی پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی۔

واقعہ کی سی سی ٹی وی فوٹیج بھی سامنے آگئی ہے ۔ پولیس نے تمام شواہد اکھٹے کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔
سکول مالک کا کہنا تھا کہ کچھ شرپسند عناصر کو محلے میں سکول بنانے پر شدید اعتراض تھا جس پر انہوں نے باقاعدہ پلاننگ کے ساتھ سکول میں گھس کر حملہ کیا اور توڑ پھوڑ کی۔تعلیم پر حملہ کرنے والوں کے خلاف دہشتگردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا جاۓ اور انہیں قرار واقعی سزا دی جاۓ۔

صادق آباد کی علمی و ادبی شخصیات نے سکول پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوۓ اسے کھلی دہشتگردی قرار دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ صادق آباد کو وزیرستان بنانے والے تعلیم دشمن شرپسندوں کے خلاف حکومت اور انتظامیہ سخت ایکشن لے۔تعلیم و تعلم سے وابستہ شخصیات کا تحفظ یقینی بنایا جاۓ۔آخری اطلاعات تک پولیس نے ایک ملزم کو گرفتار کرلیا ہے۔

سکول پر شرپسندوں کے حملے نے تعلیمی اداروں کے سکیورٹی انتظامات پر بھی سوالات اٹھا دئیے ہیں۔

sadiqabad Protest Rahim yar khan news

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close