چوکی انچارج ٹھل حمزہ کا انچارج سجاد تریلی بدمعاش بن گیا

رحیم یارخان : چوکی انچارج ٹھل حمزہ کا انچارج سجاد تریلی بدمعاش بن گیا،پٹرول پمپ سے مفت تیل حاصل کرتا رہا،نہ دینے پر مقدمات میں پھنسانے کی دھمکی،دودھ فروش سے مفت خالص دودھ جبکہ ٹھل حمزہ کی عوام کے لیے کیمیکل ملا دودھ سپلائی ہونے لگا ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر سے فوری کاروائی کا مطالبہ

 ارائیں برادری کے سربراہ ملک محمد خالدارائیں نے الزام عائد کیا کہ انچارج چوکی ٹھل حمزہ بانہ رویہ سجاد تریلی نے ٹھل حمزہ کی عوام کا جینا محال کردیا ہے ٹھل حمزہ میں موجود Hascolکمپنی کاارائیں پٹرول پمپ پر سجاد تریلی اپنے ڈرائیور مشتاق چانڈیہ کے ہمراہ آیا اور مفت 25لیٹر پٹرول سرکاری گاڑی میں ڈلواکرلے گیا دوسرے دن پھر آدھمکا کہ دوبارہ پٹرول لینے کے دباؤ ڈالا نہ دینے پر دھمکی دی کہ میں پمپ سیل کردونگا اور مقدمہ بھی درج کردونگا اس کے علاوہ سجاد تریلی کے بارے میں مزید انکشاف بھی سامنے آیا کہ وہ دودھ فروش عاشق برڑہ سے اپنے لیے مفت 2کلوخالص دودھ حاصل کرکے بقیہ میں پوڈر اور کیمیکل ڈال کر فروخت کراتا ہے عاشق برڑہ کے بارے میں سجاد تریلی کو شکایت کی گئی تھی جس پر انہوں نے عاشق برڑہ کو بلیک میل کرکے دو کلو خالص دودھ حاصل کرناشروع کردیا

سجاد تریلی کے بارے میں بتایا جاتا ہے کہ وہ کسی کو بھی نہیں چھوڑتا ہرکسی سے اپنا مفاد حاصل کرکے غلط کام کرنے کی اجازت دے رکھی ہے اور غلط کاموں کے لیے سجاد تریلی نے ایک گینگ بنارکھا ہے جسکے ذریعے غلط کام سرانجام دئیے جارہے ہیں شہری نے آئی جی پنجاب،آر پی او بہاول پور اور ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر رحیم یارخان سے مطالبہ کیا کہ سجاد تریلی کے خلاف فوری کرتے ہوئے ٹھل حمزہ کی عوام کی ان سے جان چھڑائی جائے جبکہ سجاد تریلی نے اپنے مؤقف میں ان الزامات کی تردید کی اور کہا کہ یہ سب میرے تبادلے کے لیے کیا جارہا ہے۔

Exit mobile version