fbpx

شہربھرمیں سیوریج مسائل شدت اختیارکرگئے

میونسپل کمیٹی حکام کی عدم توجہی کے باعث شہربھرمیں سیوریج مسائل شدت اختیارکرگئے‘ تجاوزات آپریشن کے نام پرلوٹ مار کی وجہ سے میونسپل کمیٹی عملہ سیوریج مسئلہ اورصفائی ستھرائی نظام کی طرف توجہ دینے سے انکاری‘ تجاوزات آپریشن میں غریب ریڑھی بان اورچھوٹے دکاندارپریشانی کاشکار‘ سامان کی توڑپھوڑاورقبضہ میں لے کرلینڈبرانچ کی جانب سے مبینہ رشوت طلب کی جانے لگی‘ شہری وسماجی حلقوں کاڈپٹی کمشنراورایڈمنسٹریٹرمیونسپل کمیٹی سے اصلاح واحوال کامطالبہ۔

بلدیاتی ادارے تحلیل ہونے کے بعد ایڈمنسٹریٹرزکے چارج سنمبھالنے کے باوجودمیونسپل کمیٹی کی کارکردگی بہترنہ ہوسکی ہے‘ میونسپل کمیٹی حکام کی عدم توجہی وناقص پالیسیوں کی بدولت شہربھرمیں سیوریج کامسئلہ شدت اختیارکرگیاہے بستی امانت علی‘ لکڑمنڈی چوک‘ محلہ کانجواں‘ چک72این پی‘ جناح پارک‘ گلشن عثمان‘ حسین آباد‘ اڈہ گلمرگ سمیت دیگرعلاقوں میں جگہ جگہ گندگی کے ڈھیراورسیوریج مسائل روزبروزبڑھ رہے ہیں جس کی وجہ سے عوام کوآمدورفت میں شدیدپریشانی کاسامناہے‘ ذرائع کے مطابق میونسپل کمیٹی حکام نے بنیادی مسائل حل کرنے کے بجائے تجاوزات آپریشن کے نام پرلوٹ مار شروع کررکھی ہے‘ میونسپل کمیٹی لینڈبرانچ افسروحیدسردارنے ریڑھی بانوں اورچھوٹے دکانداروں کے خلاف کارروائیاں کرکے ان کے سامان کی توڑپھوڑاورقبضہ میں لے کرمبینہ رشوت وصولی مہم شروع کی ہوئی ہے جس سے دکانداروں اورریڑھی بانوں میں شدیدغم وغصہ پایاجاتاہے بلکہ شہرکے بڑے بازاروں صادق بازار‘ شاہی روڈ‘ سکول بازار‘ بانوبازارمیں تجاوزات آپریشن تاحال شروع نہ ہوسکاہے شہری وسماجی حلقوں نے ڈپٹی کمشنررحیم یارخان اورایڈمنسٹریٹرمیونسپل کمیٹی سے تجاوزات کی بجائے سیوریج مسائل اورصفائی ستھرائی کانظام بہترکرنے کامطالبہ کیاہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close