رحیم یارخان کے خصوصی سکولوں میں اساتذہ کم ،سہولیات ناپید

خصوصی رپورٹ رحیم یارخان ڈاٹ نیٹ ٹیم

رحیم یارخان ضلع بھر کے7سپیشل ایجوکیشن سکولوں میں زیر تعلیم 980طلبا وطالبات کے لیے صرف 109اساتذہ اور 13گاڑیاں، 13کروڑ 75لاکھ بجٹ میں سے طلبا وطالبات کے لیے صرف 3کروڑ کا بجٹ،ناکافی اساتذہ، سیوریج ،سینی ٹیشن کے گھمبیر مسائل، فرنیچر وآلات کی عدم دستیابی سے طلبا کا تعلیمی نقصان، انتظامیہ ،ارباب اختیار خاموش، تفصیل کے مطابق رحیم یارخان کی چاروں تحصیلوں میں7سپیشل ایجوکیشن سکولز قائم ہیں جن میں سے رحیم یارخان تحصیل میں 3،لیاقت پورمیں1، خانپور میں 2جبکہ صادق آباد تحصیل میں ایک سکول قائم ہے۔ ان تمام سکولوں میں 980سپیشل طلبا و طالبات زیر تعلیم ہیں جن میں سے711طلبا سننے کی صلاحیت سے محروم، 49بصارت سے، 111ذہنی معذور،53جسمانی اور 56سلو لرنرز طلبا ہیں۔ ان طلبا وطالبات کے لیے منظور شدہ 192اساتذہ میں سے صرف 109اساتذہ پڑھانے پر تعینات ہیں اور 83اساتذہ کی سیٹیں تاحال خالی ہیں۔ ضلع بھر کے ان 7سکولوں کے لیے سالانہ بجٹ 13کروڑ 75لاکھ 90ہزار 336روپے ہے جس میں سے صرف 3کروڑ 71لاکھ 92ہزار 372روپے کا نان سیلری بجٹ مختص کیا گیا ہے جبکہ 109اساتذہ ودیگر سٹاف کے لیے 10کروڑ 3لاکھ97ہزار 964روپے تنخواہوں کی مد میں خرچ کیے جارہے ہیں۔ مذکورہ سکولوں میں سہولیات کی عدم دستیابی جن میں فرنیچر کی کمی، طلبا وطالبات کی تعلیمی استعداد بڑھانے کے لیے خصوصی آلات کی عدم فراہمی، سکولوں میں سیوریج اور سینی ٹیشن جیسے مسائل عرصہ دراز سے حل طلب ہیں مگر اس سلسلہ میں ارباب اختیار اور انتظامیہ بالکل خاموش ہے، 980طلبا وطالبات کو پک اینڈڈراپ کی سہولت فراہم کرنے والی بسیں صرف 13دی گئی ہیں جن میں سے چند ایک سٹاف کو ڈراپ کرنے کے لیے استعمال کی جاتی ہیں جس کے باعث طلبا وطالبات کو دوشفٹوں میں گھروں تک پہنچایا جاتاہے۔ سکول انتظامیہ کے مطابق متعددپانچ مزید گاڑیوں کی ضرورت ہے جبکہ 83اساتذہ کی سیٹیں تاحال خالی ہیں جنہیں فل کرنے کے لیے ارباب اختیار کو بارہا مرتبہ لیٹرز لکھے گئے ہیں۔ اسی طرح سکولوں کی عمارتوں کے حوالے سے بتایاگیا کہ تین سکول کرائے کی عمارتوں میں قائم ہیں ،ایک سکول میں دو سکولوں کے طلبا ایڈجسٹ کیا گیاہے تین سکولوں کو اپنی سرکاری بلڈنگ ہے جہاں تعلیمی نظام سرگرمیاں جاری ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »
Close
Close