fbpx

رضاکاروں کے عالمی دن کےموقع پر سیمیناراور ریلیاں

رحیم یارخانرضاکاروں کے عالمی دنکی مناسبت سے ضلع بھر میں ریسکیو1122نے مختلف اداروں میں سیمیناروں کا انعقاد اور آگہی ریلیاں نکالیں۔ رضاکاروں کا عالمی دن پوری دنیا میں منایاجاتاہے
۔اس دن کو منانے کا مقصد تربیت یافتہ رضاکاروںکی قدرتی آفات وسانحات میں مصیبت زدہ اور تکلیف میں مبتلامریضوںاورافراد کی مددکرنے کو خراجِ تحسین پیش کرنا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ کمیونٹی کے نوجوانوں کواس کارِخیر میں حصہ ڈالنے کے لیے ریسکیورضاکاربننے کی ترغیب دینا ہے۔
کیونکہ بڑے حادثات وقدرتی آفات میں یہ ریسکیو رضاکار کسی بھی ادارے میں ریڑھ کی ہڈی کی اہمیت رکھتے ہیں۔ضلع رحیم یارخان میں اس دن کی مناسبت سے3روزہ مہم چلائی جس میں مختلف سکول و کالجزاوردیگر اداروں میں ریسکیورضاکاروں کی اہمیت اُجاگر کرنے کے لیے سیمینارمنعقد کئے گئے،
تمام تحصیلوں میں اس کی آگہی کیلئے پمفلٹ وبروشرزتقسیم کئے گئے،ایمرجنسی گاڑیوں ،اہم چکوک اور ریسکیوسٹیشنوں پر آگہی بینرز آویزاں کئے گئے،
اسی طرح ضلع کی چاروں تحصیلوں میں آگہی ریلیوں کا انعقادکیا گیا جس میںبڑی تعدادمیں ریسکیو 1122کے اہل کاروں،ڈسٹرکٹ انتظامیہ،اے ڈی سی جنرل شیخ طاہر،ریسکیورضاکاروں ،طلبائ،سکاﺅٹس،مختلف آرگنائزیشنز کے نمائندوں،سماجی کارکنان،ریڈز پاکستان،نیشنل ہائی وے اینڈموٹروے پولیس،پنجاب پولیس،ٹریفک پولیس،سول ڈیفنس،ٹیم سرِعام،ایچ ڈی ایف اور دیگر افراد نے شرکت کی۔
رحیم یارخان میں سٹی پُل سے دُعا چوک تک ریسکیو1122کی راہنمائی میں ریلی نکالی گئی،اس موقع پر ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر عبدالستار بابر نے اپنی تقریر کے دوران کہا کہ ریسکیو1122 ضلع کی چاروں تحصیلو ں میں27ہزار سے زائد ریسکیومحافظ رجسٹرڈ کرچکی ہے،جن میں سے سینکڑوں کو ریسکیوکی تربیت بھی فراہم کردی گئی ہے۔ضلع کی 139یونین کونسلوں میں کمیونٹی ایمرجنسی ریسپانس ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیںجوکہ ان علاقوں میں آنے والی کسی بھی آفت سے اپنی مدد آپ کے تحت نمٹنے اور ضرورت کے وقت ریسکیواداروں کی مدد کے لیے دستیاب ہوں گی۔تقریر کے آخر میں انہوں نے کہا کہ ریسکیو 1122کا مقصدصحت مند ومحفوظ معاشرے کا قیام ہے،جوکہ تربیت یافتہ ریسکیورضاکاروں کے بغیر ممکن نہیںاورعوام سے اپیل کی کہ آئیں ریسکیورضاکاربنیں اور معاشرے کا فعال شہری بنیں۔آگہی ریلی کے اختتام پرریسکیورضاکاروں کی سلامتی اور اس مقصد کے لئے اپنی جانوں کانذرانہ پیش کرنے والوں کے درجات کی سربلندی کے لیے دعا کی گئی۔
 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »