بھارت کی جانب سے ایل او سی کی مسلسل خلاف ورزی! پاکستان خاموش نہ رہا ، 27فروری 2020کو بھی یادگار بنا دیا

رحیم یارخان (این این آئی) پاکستان نے ایل او سی کی خلاف ورزی پر بھارتی سفارتکار کو دفتر خارجہ طلب کر کے شدید احتجاج کیا ہے ۔

بدھ کو ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق ایل او سی پر بھارتی فورسز کی جانب سے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی پر پاکستان میں بھارتی ہائی کمیشن کے سینئر سفارتکار کو دفتر خارجہ طلب ککر کے احتجاج ریکارڈ کرایا گیا۔ترجمان کے مطابق 25 فروری کو ایل او سی کے نیزہ پیر سیکٹر پر بھارتی فورسز کی جانب سے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی گئی۔ترجمان دفتر خارجہ کیم طابق ایل او سیپر بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے 40 سالہ محمد بشیر شدید زخمی ہوئے،

بھارتی فورسز ایل او سی پر مسلسل معصوم شہریوں کو نشانہ بنا رہی ہیں۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق بھارت کی اشتعال انگزیزی خطے میں امن و سلامتی کے لیے خطرہ ہے،بھارت ایسی حرکتوں سے مقبوضہ کشمیر سے دنیا کی توجہ نہیں ہٹا سکتا۔

ترجمان نے کہاکہ بھارت اقوام متحدہ سیکورٹی کونسل کی قراردادوں پر عمل درآمد یقینی بنائے،شہری آباد کو نشانہ بنانا 2003 کے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی ہے ۔ترجمان دفتر خارجہ نے کہاکہ نہتے شہریوں کو بے گناہ نشانہ بنانا بین الاقوامی قوانین کے بھی منافی ہے ، اقوام متحدہ کے مبصر گروپ کو ایل او سی کی معائنے کی اجازت دی جائے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Translate »